باچا خان نے آمریت کا ڈٹ کر مقابلہ کیا،زاہد خان 

باچا خان نے آمریت کا ڈٹ کر مقابلہ کیا،زاہد خان 

  

نوشہرہ (بیورورپورٹ) عوامی نیشنل پارٹی تحصیل نوشہرہ کے صدر زاہد خان نے کہا ہے کہ خدائی خدمتگار تحریک کے بانی خان عبدالغفار خان (باچا خان) اور رہبر تحریک خان عبدالولی خان پاکستانی سیاست کے وہ دو عظیم رہنما تھے جس نے ہمیشہ اس خطے کے عوام اور بلخصوص پختون قوم کے حقوق کے حصول کیلئے نہ صرف آواز اٹھائی بلکہ ان کے حقوق کیلئے ہر حد پار کی تھی،ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے ایک اخباری بیان میں کیا ہے زاہد خان نے مزید کہا کہ خان عبدالغفار خان (باچا خان) برصغیر کے ان سیاست دانوں میں شمار ہوتے ہیں جنہوں نے اس خطے کی آزادی کیلئے نہ صرف آواز بلند کی بلکہ انہوں نے عملی طور پر بھی قوم کی زہنی، سیاسی، شعوری، تعلیمی ابیاری کرتے ہوئے ان کو ازادی کی اہمیت سے روشناس کرایا تعلیم کے حصول پر زور دیا اور مکتب سکولوں کا اغاز کرکے پختون قوم کو علم کی زیور سے آراستہ کرنے کیلئے عملی جدو جہد کیا انہوں نے مزید کہا کہ عوامی نیشنل پارٹی نے رواں ہفتہ باچا خان کے نام سے منسوب کیا ہوا ہے، اور ہفتہ باچا خان کی تیاریاں مکمل کر دی گئی ہیں اور اس حوالے سے رنگا رنگ پروگرامات تشکیل دئیے گئے ہیں، انہوں نے مزید کہا کہ خان عبدالولی خان نے اپنے والد باچا خان کی نقش قدم پر چلتے ہوئے پختون قوم کی ترقی و خوشحالی کیلئے ان کو تعلیمی، سیاسی، شعوری،، اقتصادی اور معاشی طور پر مستحکم کرنے کیلئے ایک اہم کردار ادا کیا جو کہ تاریخ کی اوراق کی زینت بنی ہوئی ہے انہوں نے کہا کہ عوامی نیشنل پارٹی کے ان دو رہنما وں خدائی خدمتگارخان عبدالغفار خان باچاخان اوررہبر تحریک خان عبدالولی خان نے ہر دورمیں امریت کا ڈٹ کرمقابلہ کرکے پختون قوم کے استحصال کیخلاف آواز بلند کی ہے انہوں نے مزید کہا کہ پختون قوم احسان فراموش قوم نہیں ہے اور وہ اپنے ان دونوں رہنماوں خان عبدالغفار خان باچا خان اور رہبر تحریک خان عبدالولی خان کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے عوامی نیشنل پارٹی کی قیادت کے بیانیے کو گھر گھر پہنچا کر اپنا حق ادا کریں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -