احساس پروگرام:مالدارخواتین ”وظیفہ خوار“،حق دارخوار 

احساس پروگرام:مالدارخواتین ”وظیفہ خوار“،حق دارخوار 

  

 ٹبہ سلطان پور(سٹی رپورٹر) احساس کفالت پروگرام بھی سیاست اوررشوت کی نذرہوگیا۔غریب طبقہ کی خواتین تاحال امداد سے محروم اور دھکے کھانے پرمجبورہیں۔مالدارگھرانوں کی خواتین احساس کفالت پروگرام امدادکی تیسری قسط سے بھی مستفید ہونے کوتیارہیں۔مستحق خواتین  نے شدیداحتجاج کرتے ہوئے ڈی سی وہاڑی سے فوری نوٹس لینے کا مطالبہ کردیا۔  2021(بقیہ نمبر51صفحہ6پر)

میں سب تحصیل ٹبہ سلطان پور کے مختلف دیہاتی علاقوں کاسروے کیا گیاتاکہ غریب طبقہ کی خواتین کااندراج کرکے احساس کفالت پروگرام کے تحت امدادکی جاسکے لیکن سروے میں ان خواتین کے نام کااندراج کیاگیاتھاجونام سیاسی ڈیروں سے موصول ہوئے تھے اور اب 2022کے پہلے مہینے میں سفارش پر اندراج کیے جانیوالی خواتین احساس کفالت پروگرام  امداد کی تیسری قسط سے بھی مستفید ہو نے جارہی ہیں لیکن غریب طبقہ کی خواتین تاحال دھکے کھانے پرمجبورہیں باوثوق ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ احساس کفالت امدادپروگرام مرکزمیلسی کے ٹبہ سلطان پور،دوکوٹہ،مترو،اورچوک میتلامیں ایجنٹ موجودہیں جوکہ خواتین سے تین ہزارروپے وصول کرکے ہرقسط اوکے کرواکردے رہے ہیں اس کے مقابلے میں غریب گھرانوں کی خواتین دھکے کھانے پرمجبورہیں اورہرغریب خاتون کونااہل قراردیاجارہاہے اہل علاقہ کی غریب طبقہ کی خواتین ضیہ بی بی،عنصرمائی،ظہورمائی،ممتازبی بی،پروین بی بی،ارشادمائی،کوثربی بی،ذرینہ بی بی،تسلیم بی بی،ثمیرہ بی بی ودیگرخواتین نے ڈی سی وہاڑی سے مطالبہ کیا ہے کہ فوری طور پر نوٹس لیکر احساس کفالت پروگرام کاجائزہ لیا جائے اور چیکنگ کرکے غریب طبقہ کی خواتین کے ناموں کااندراج کرواکرسیاسی اور سفارشی اندراج خارج کرکے احساس کفالت پروگرام امدادکی رقوم مستحق خواتین تک پہنچائی جائیں۔

احساس پروگرام

مزید :

ملتان صفحہ آخر -