پنجاب حکومت صوبے میں فرقہ واریت پروان چڑھارہی ہے: جمعیت اہل حدیث پاکستان

پنجاب حکومت صوبے میں فرقہ واریت پروان چڑھارہی ہے: جمعیت اہل حدیث پاکستان
پنجاب حکومت صوبے میں فرقہ واریت پروان چڑھارہی ہے: جمعیت اہل حدیث پاکستان

  

لاہور(پ ر )جمعیت اہل حدیث پاکستان کے مرکزی راہنماءحافظ خالد شہزاد فاروقی نے کہا ہے کہ پنجاب حکومت صوبے میں فرقہ واریت کو پروان چڑھانے کے لئے ایک” مخصوص مسلک “کو سرکار ی اداروں میں” اندھا دھند نوازنے“میں مصروف ہے ،ن لیگ کی جانب سے فرقہ پروروں کی پذیرائی سے ملک بھر میں تشویش پائی جاتی ہے اگر حکومت نے اپنے رویئے تبدیل نہ کئے تو صوبے بھر کو فرقہ واریت کا عفریت اپنے چنگل میں لے لے گا ،علامہ احسان الٰہی ظہیر شہید اسلامک سینٹر میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے حافظ خالد شہزاد فاروقی نے کہا کہ سُود کی لعنت کی حفاظت کرنے والی حکومت نے ملک بھر میں ہونے والی شرک و بدعات اور عقیدہ توحید کے منافی پروگراموں کو فروغ دینے کے لئے وزیر اعلیٰ ہاﺅس میں ایک”خصوصی سیل“ قائم کر رکھا ہے جہاں سے اِن پروگراموں کو مانیٹر کیا جاتا ہے۔اُنہوں نے کہا کہ پاکستان اسلام کے نام پر قائم ہوا مگر بد قسمتی کی بات ہے کہ اِس ملک پر آج تک قرآن و سنت کا راج قائم نہیں ہو سکا ،قرآن سنت کانفاذ اور شرک وبدعات کا ردحکومت کا اصل فریضہ ہے ،اللہ اگر کسی خطے کی حکومت مسلمانوں کو عطا کرے اور وہ حکومت اللہ کے حکموں کا نفاذ نہ کرے اور مختلف حیلوں بہانوں سے کام لے تو اللہ نے اپنے قرآن میں ایسے حکمرانوں کو کافر ،فاسق اور منافق کہہ کر مخاطب کیا ہے ۔ حافظ خالد شہزاد فاروقی نے کہا کہ ن لیگ کے زعماءاپنی دنیا و آخرت بہتر بنانے اور اپنے آپ کو کفر،فسق اور منافقت سے دور رکھنے کے لئے فوری طور پر ملک میں قرآن و سنت کا نظام نافذ اور شرک و بدعات جیسے قبیح افعال کے خاتمے کے لئے اپنا کردار ادا کرے ۔

مزید : لاہور