کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ 2ارب 9 کروڑ ڈالر پہنچنا تشویشناک ہے ،خادم حسین

کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ 2ارب 9 کروڑ ڈالر پہنچنا تشویشناک ہے ،خادم حسین

لاہور ( کامرس رپورٹر) ممتازتاجر رہنما وفیروز پور بورڈ لاہور کے سینئر نائب صدر خادم حسین ایگزیکٹو ممبرلاہور چیمبرز آف کامرس نے زرمبادلہ کے ذخائر میں61کروڑ ڈالر کی کمی اور کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ 2ارب 9کروڑ ڈالر پہنچنے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ سٹیٹ بینک آف پاکستان کی رپورٹ کے مطابق زرمبادلہ کے ذخائر میں61کروڑ ڈالر کی کمی ہوگئی اور پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ148.5فیصد سے تجاوز کرکے 2ارب9کروڑ ڈالر پہنچ گیا۔انہوں نے کہا کہ برآمدات میں اضافہ سے ہی زرمبادلہ کے ذخائر میں اضافہ اور تجارتی خسارہ میں کمی ہوگی ان خیالات کا اظہار انہوں نے فیروز پور بورڈ کے تاجروں کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ خادم حسین نے کہا کہ برآمدات میں اضافہ کیلئے صنعتی و تجارتی مقاصد کیلئے بجلی و گیس کی قیمتوں میں کمی ،بیرون ملک منڈیوں کی تلاش ،بیرون ملک صنعتی نمائش کے ساتھ ساتھ برآمدکنندگان کو سیلز ٹیکس ریفنڈ ز کی بروقت ادائیگی یقینی بنائی جائے تاکہ ملکی برآمدات میں اضافہ اور زرمبادلہ کے ذخائر بڑھ کر تجارتی خسارہ کنٹرول کیا جائے ۔

اسی طرح ملک خوشحالی و ترقی کی راہوں پر گامزن ہوگا۔

مزید : کامرس