خیبر ایجنسی کے محکمہ تعلیم میں 67 گھوسٹ استانیوں کا انکشاف

خیبر ایجنسی کے محکمہ تعلیم میں 67 گھوسٹ استانیوں کا انکشاف

خیبر ایجنسی (عمران شنواری)خیبر ایجنسی محکمہ تعلیم میں 67گھوسٹ استانیوں کا انکشاف ہوا ہے ایجوکیشن آفیسر نے چھ رکنی کمیٹی تشکیل دے دی 12استانیاں انکوائری کمیٹی کے سامنے پیش ہوئیں ہیں باقی غائب ہیں بعض استانیوں کی بڑے سرکاری اداروں کی سربراہوں کی سفارش کیلئے ایجو کیشن آفیسر کو فو ن کی گئی اور بحال کرنے پر زور دیا گیا ہے ایجوکیشن آفیسر نے تما م استانیوں کو معطل کر دی گئی ہے اور انکی تنخواہیں بند کر دی گئی ہیں محکمہ تعلیم ذرائع کے مطابق خیبر ایجنسی محکمہ تعلیم میں 104گھوسٹ استانیوں کا انکشاف ہو اہیں لیکن بعد میں 37استانیوں کی نا م یا ولد یت میں فرق سے گھوسٹ استانیوں میں نام شامل ہو گئی تھی جو بعد محکمہ تعلیم نے کلئیر کردی اور 67استانیوں پر چھ رکنی انکوائری کمیٹی تشکیل دی تاکہ وہ معلوم کر سکے کہ کسی کے ساتھ ناانصافی نہ ہو سکے ذرائع نے یہ بھی بتا یا کہ اس میں بعض استانیاں کسی سالوں سے غیر حاضر تھے اور وہ باقاعدہ تنخواہیں وصول کر تی تھی لیکن ایجوکیشن آفیسر کے خیبر ایجنسی کے مختلف سکولوں پر چھاپوں اور ریکارڈ دیکھنے کے بعد معلو اہو ا کہ 67استانیاں کئی سالوں سے غیر حاضر ہیں اس سلسلے میں ایجوکیشن آفیسر جدون وزیر نے بتا یا کہ گورنمنٹ ہائی سکولوں کے پرنسپلز کو انکوائری کمیٹی میں شامل کئے گئے ہیں پورے تحقیقات کے بعد فیصلہ کیا جائے گا انہوں نے کہا کہ کسی کے ساتھ کوئی نا انصافی نہیں ہو گی لیکن طلباء اور طالبات کی مستقبل داو پر لگانے نہیں دینگے جو ڈیوٹی نہیں کر ے گا اس کے خلاف سخت قانونی کاروائی کی جائیگی واضح رہے کہ امسال سالانہ میٹرک امتحان میں خیبر ایجنسی کے کسی سرکاری سکول کے طالبہ نے اچھی پوزیشن حاصل نہیں کی بلکہ طالبات ہر وقت اپنے والدین سے استانیوں کی غیر حاضری کی شکایت کر رہی ہیں اور بار بار میڈیا پر رپورٹ ہونے کے باوجود بھی کچھ نہیں ہو سکا

مزید : پشاورصفحہ آخر