چیف کمشنر کی عدم تعیناتی ‘ ریجنل ٹیکس آفس ساہیوال فعال نہ ہوسکا

چیف کمشنر کی عدم تعیناتی ‘ ریجنل ٹیکس آفس ساہیوال فعال نہ ہوسکا

ملتان( نیوز رپورٹر ) ریجنل ٹیکس آفس آر ٹی او ان لینڈ ریونیو ساہیوال اپنے قیام کے 21 روز گزرنے کے باوجود چیف کمشنر کی عدم تعیناتی کے باعث فعال نہ ہوسکا جبکہ قصور ٹیکس بار ایسوسی ایشن نے قصور زون کو لاہور سے آر ٹی او ساہیوال میں شامل کرنے کیخلاف عدالت سے رجوع کرکے تین ماہ کیلئے حکم امتناعی حاصل کرلیا ہے ۔ اس صورتحال میں آر ٹی او ساہیوال کی اکتوبر تک فعالیت موخر ہو کر رہ گئی ہے ۔(بقیہ نمبر38صفحہ7پر )

ذرائع کے مطابق عدالت کی جانب سے تین ماہ کیلئے حکم امتناعی جاری ہونے کے بعد آر ٹی او ساہیوال میں شامل کیے گئے اضلاع قصور اور اوکاڑہ زونز واپس لاہور ریجنل ٹیکس آفس سے منسلک ہو گئے ہیں اور خانیوال ‘ میاں چنوں زونز ریجنل ٹیکس آفس آر ٹی او ملتان کے ماتحت زونز کی حیثیت سے کام کرینگے ۔ اسی طرح ریجنل ٹیکس آفس آر ٹی او ساہیوال کی حیثیت بھی ایف بی آر کی جانب سے چیف کمشنر کی تعیناتی تک ساہیوال زون کی حیثیت سے آر ٹی او ملتان سے منسلک ہو گئی ہے ۔ واضح رہے کہ چیئرمین ایف بی آر نے یکم جولائی 2017 کو ریجنل ٹیکس آفس آر ٹی او ساہیوال کا افتتاح کیا تھا لیکن تاحال فعال نہیں کیا جا سکا ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر