عدالت مفروضوں نہیں ثبوتوں پر فیصلہ دیگی: شیر علی گورچانی

عدالت مفروضوں نہیں ثبوتوں پر فیصلہ دیگی: شیر علی گورچانی

جام پور(نمائندہ خصوصی)ڈپٹی سپیکرپنجاب اسمبلی سردارشیرعلی خان گورچانی نے (بقیہ نمبر50صفحہ12پر )

کہاہے کہ پاناماکیس میں وزیراعظم پاکستان کے خلاف کرپشن اوربددیانتی کے کوئی ثبوت سامنے نہیں آئے ،جے آئی ٹی اپنی رپورٹ میں وزیراعظم پاکستان کے خلاف کوئی بھی ثبوت پیش کرنے میں ناکام رہی ہے ،عدالت مفروضوں کی بجائے ثبوتوں کی بنیادپرفیصلہ دے گی ،میاں نوازشریف متعددبارکہ چکے ہیں کہ وہ سپریم کورٹ کافیصلہ من وعن قبول کریں گے ان خیالات کااظہارانھوں نے گذشتہ روزچیئرمین یوسی مہرے والاسردارجمیل الرحمان خان بزدار،ماسٹرنذیراحمدسے ملاقات کے دوران گفتگوکرتے ہوئے کیا انھوں نے کہاکہ یہ کونسااحتساب ہے جس میں اربوں روپے کے ٹیکس چوروں ،کرپشن کنگ اورقرض معاف کرانے والوں کو چھوڑکرصرف اور صرف شریف فیملی کونشانہ بنایاجارہاہے سردارشیرعلی خان نے کہاکہ احتساب صرف عوام کی عدالت سے ہوگاجس کافیصلہ2018کے الیکشن میں ہوگاانشااللہ عوامی احتساب سے ہم سرخروہوکردوبارہ بھاری اکثریت سے کامیاب ہوکرآئیں گے ڈپٹی سپیکرنے کہاکہ ایک طرف میاں برادران ہیں جو اپنے پورے خاندان سمیت عدالتوں میں پیش ہوئے تودوسری طرف ،،اشتہاری خان،، درجنوں مقدمات میں اشتہاری ہونے کے باوجودسب سے بڑاپارسابن بیٹھاہے اورعدالتوں کی جانب سے طلب کرنے پردھمکیاں دیتاہے عمران خان دوسروں کو انصاف کادرس دینے کی بجائے خودعدالتوں میں پیش ہوں ۔

شیر گورچانی

مزید : ملتان صفحہ آخر