کرایہ مانگنے پر پولیس اہلکاروں کا بس کنڈیکٹر پر تشدد‘ احتجاجاً روڈ بلاک

کرایہ مانگنے پر پولیس اہلکاروں کا بس کنڈیکٹر پر تشدد‘ احتجاجاً روڈ بلاک

چوک سرورشہید(سپیشل رپورٹر)پولیس والے سے کرایہ کیوں مانگا۔ پولیس اہلکاروں کا مسافر بس کنڈیکٹر پر سربازار تشدد،بس عملہ (بقیہ نمبر37صفحہ12پر )

نے احتجاجاًایم ایم روڈ بلاک کرکے احتجاج شروع کردیا ، تفصیل کے مطابق گزشتہ روز ملتان سے میانوالی جانے والی مسافر بس نمبری1675 میں مظفرگڑھ سے ایک پولیس اہلکار سوار ہوا۔ بس کنڈیکٹر غلام شبیر گجر نے کرایہ مانگا تو اس نے دینے سے انکار کردیا۔ جس پر تکرار ہوگیا۔پولیس اہلکار نے تھانہ سرورشہید اطلاع کردی۔جس پر پولیس تھانہ سرورشہید کے ایس آئی عبدالحمید بھٹہ کی سربراہی میں نفری مرکزی چوک پہنچ گئی۔اور بس کو روک کر کنڈیکڑ غلام شبیر گجر کو بس سے اتار ا سڑک پر لٹا کر بے پناہ تشدد کا نشانہ بنایا اور پھر اسے گرفتار کرکے ڈالا میں ڈال کر تھانہ لے گئے۔جس پر اس بس کے ڈرائیور نے احتجاجاًمرکزی چوک پر بس کھڑی کرکے احتجاج شروع کردیا۔ جس کی وجہ سے ٹریفک بند ہوگئی۔اور گاڑیوں کی میلوں لمبی لائینیں لگ گئیں۔جس میں پٹرول سے بھرے ٹینکر ،ٹرک، اور بسوں کی میلوں لمبی لائینیں لگ گئیں۔ حالات بگڑتے دیکھ کر ایس ایچ او تھانہ سرورشہید غلام یٰسین تھہیم مرکزی چوک پہنچ گئے اور ٹراانسپورٹروں سے ہاتھ جوڑ کر معافی مانگی۔اور گرفتا ر کنڈیکٹر کو فور ی طور رہا کردیا ۔ اور پولیس اہلکاروں کے خلاف کارروائی کی یقین دہانی کرائی ۔ جس پر ایک گھنٹہ بعدہڑتا ل اور احتجاج ختم کردیا گیا۔

کنڈیکٹر تشدد

 

مزید : ملتان صفحہ آخر