میڈیکل سٹوروں پر قیمتوں کی فہرستیں آویزاں نہ کرنے اورادویات کی قیمتوں میں اضافہ چیلنج

میڈیکل سٹوروں پر قیمتوں کی فہرستیں آویزاں نہ کرنے اورادویات کی قیمتوں میں ...
میڈیکل سٹوروں پر قیمتوں کی فہرستیں آویزاں نہ کرنے اورادویات کی قیمتوں میں اضافہ چیلنج

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)میڈیکل سٹوروں پر ادویات کی قیمتوں کی فہرستیں آویزاں نہ کرنے اورادویات کی قیمتوں میں بھاری اضافے کو لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا گیا ہے۔

ہائی کورٹ نے ماتحت عدالتوں کے تمام ججوں کے اثاثہ جات کی تفصیلات طلب کرلیں

اس سلسلے میں جوڈیشل ایکٹوازم پینل کی طرف سے درخواست دائر کی گئی ہے جس میں اظہر صدیق ایڈووکیٹ کی وساطت سے موقف اختیار کیا گیا ہے کہ میڈیکل سٹوروں پر ادویات کی فہرستیں آویزاں نہیں کی جاتیں جس کی وجہ سے صارفین مہنگے داموں ادویات خریدنے پر مجبور ہیں، قانون کے مطابق میڈیکل سٹور مالکان پابند ہیں کہ وہ ادویات کی قیمتوں کی فہرستیں آویزاں کریں لیکن ایسا نہ کرنے سے میڈیکل سٹور مالکان مریضوں اور صارفین کو دونوں ہاتھوں سے لوٹ رہے ہیں، درخواست میں کہا گیا ہے کہ ادویہ ساز کمپنیوں نے کینسر،ہیپاٹائٹس سمیت دیگر موذی بیماریوں کے علاوہ جان بچانے والی ادویات کی قیمتوں میں کسی فارمولے کے بغیر از خود اضافہ کر دیاہے۔ادویہ کی قیمتوں کے تعین کے لئے حکومت کی طرف سے کوئی فارمولا نہیں دیا گیاہے ،ہزاروں مریض مہنگی ادویات خریدنے کی سکت نہیں رکھتے اور سسک سسک کر جان دے دیتے ہیں۔درخواست میں کہا گیا کہ ادویہ ساز اداروں کو قیمتوں کے تعین سے متعلق قانون کے دائرے میں لانے کے لئے حکومت کو موثر قانون سازی کا حکم دیا جائے اورمیڈیکل سٹوروں پر موجود تمام ادویات کی قیمتیں سٹوروں پرآویزاں کرنے کا حکم دیتے ہوئے تمام ادویات کے ادویاتی نام ان کے ڈبوں پر شائع کرنے کا بھی حکم دیا جائے۔درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ از خود قیمتیں بڑھانے والی کمپنیوں کے خلاف ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی کو قانون کے مطابق کارروائی کرنے کا بھی حکم دیا جائے۔ 

مزید : لاہور