جعلی افسر بن کر شہریوں سے 25لاکھ روپے لوٹنے والے2ملزمان کی نیب سے پلی بار گین 

جعلی افسر بن کر شہریوں سے 25لاکھ روپے لوٹنے والے2ملزمان کی نیب سے پلی بار گین 
جعلی افسر بن کر شہریوں سے 25لاکھ روپے لوٹنے والے2ملزمان کی نیب سے پلی بار گین 

  

لاہو ر(ویب ڈیسک) احتساب عدالت لاہور نے نیب کے جعلی افسر بن کر شہریوں سے 25لاکھ روپے لوٹنے والے دو ملزمان کی پلی بار گین کی درخوات منظور کر لی۔ ملزم گلزار احمد کی طرف سے 19لاکھ جبکہ ملزم عمران مقصود کی طرف سے 6لاکھ روپے ادا کر دیئے گئے ۔ احتساب عدالت کے جج منیر احمد نے دونوں ملزمان کو ربا کرنے کا حکم دے دیا۔

اس سے قبل نیب تفتیشی وحید احمد کی درخواست پر عدالت تیسرے ملزم ملک امجد سدھیر کو رہا کرنے کا حکم دے چکی ہے۔ ملزمان نے خود کو نیب کے افسران ظاہر کرتے ہوئے انیس الرحمن کو لوٹا اور 25لاکھ روپے وصول کئے۔ ملزمان نیب کے جعلی کاغذات تیا ر کر کے جائیدادیں دلانے کا بھی جھانسہ دیتے تھے۔ اب ان کی طرف سے پلی بارگین کی درخواست دی گئی جس پر ریجنل بورڈ میٹنگ میں معاملہ زیر غور آیا۔ جہاں ملزمان کی بارگین کی درخواست منظور کر لی گئی جس پر عدالت نے اس کی حتمی منظوری دی۔ 

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -