نوجوان کا لڑکی کوفون ، جب لڑکی اپنے آبائی علاقے میں گئی تو نوجوان بھی ملنے پہنچ گیا اور پھر بھرے بازارمیں ایسی بات کہہ دی کہ لڑکی برہم ہوگئی، چپل اتاری اور پھر۔ ۔ ۔

نوجوان کا لڑکی کوفون ، جب لڑکی اپنے آبائی علاقے میں گئی تو نوجوان بھی ملنے ...
نوجوان کا لڑکی کوفون ، جب لڑکی اپنے آبائی علاقے میں گئی تو نوجوان بھی ملنے پہنچ گیا اور پھر بھرے بازارمیں ایسی بات کہہ دی کہ لڑکی برہم ہوگئی، چپل اتاری اور پھر۔ ۔ ۔

  

نئی دہلی (ڈیلی پاکستان آن لائن)اتر پردیش کے ضلع بستی میں ایک لڑکی نے منچلے کی حرکتوں سے تنگ آکر بھرے بازارمیں چپلوں سے پٹائی کردی۔

تفصیلات کے مطابق بستی کی رہنے والی لڑکی کو قریب کے گاؤں کھرہٹیاں کا رہنے والا نوجوان وکرم جیت فون کیا کرتا تھا ،پھر گفتگو کا سلسلہ دراز ہوتا چلا گیا۔ لڑکی نے ابتدامیں اسے منع کیا اور حرکت سے باز آنے کی تاکید کی لیکن وکرم باز نہیں آیا۔ لڑکی دہلی میں زیرتعلیم ہے۔ وہ جب چھٹی کے دوران بستی گئی تو وکرم اس سے ملاقات کیلئے پہنچ گیااور لڑکی کو دیکھتے ہی ’’آئی لو یو ‘‘کہہ دیا ۔

یہ جملہ سنتے ہی لڑکی نے دائیں دیکھا نہ بائیں اور بھرے بازار میں چپلوں سے اس کی تواضع شروع کردی، لڑکے کی نوجوان لڑکی کے ہاتھوں پٹائی ہوتے دیکھ کر راہگیر بھی اکٹھے ہوگئے اور جب صورتحال کا علم ہوا تو راہگیروں نے بھی جم کر اس پر ہاتھ صاف کیا۔ چپلوں سے خاطر تواضع کے بعد لڑکی سے نوجوان نے معافی مانگی اور آئندہ اپنی حر کتوں سے باز آنے کا وعدہ کیا تو لوگوں نے اسے چھوڑ دیا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس