صنعتی ترقی کیلئے بھر پور تعاون کرینگے: میاں انجم نثار 

صنعتی ترقی کیلئے بھر پور تعاون کرینگے: میاں انجم نثار 

  

لاہور(لیڈی رپورٹر)بزنس مین پینل(بی ایم پی) کی پارلیمانی کمیٹی کا ایک اہم اجلاس گزشستہ روز ہیڈ افس گلبرگ لاہور میں منعقد ہوا۔ اجلاس میں صوبہ سندھ،پنجاب، خیبر پختونخواہ، فیڈرل اور بلوچستان سے بزنس مین پینل کے قاعدین نے شرکت کی، اجلاس میں صنعت و تجارت کو درپیش کووڈ19 کی صورتحال کے تناظر میں بزنس کمیونٹی کی مشکلات سمیت مختلف امور پر تبادلہ خیالات کیا گیا۔ چاروں صوبوں سے آئے بزنسمین پینل کے قاعدین نے ایف پی سی سی آئی کے صدر میاں انجم نثار کی بزنس کمیونٹی کے لئے محنت اور کوششوں کی تعریف کی اور خاص طور پر کورونا وبا کی وجہ سے معیشت کی صورتحال،  شرح سود کو 13.25 سے 7  فیصد پر لانے، کرونا وبا کی وجہ سے صنعت و تجارت کے لئے ریلیف کے اقدامات بزنس کمیونٹی کے حوصلہ افزا اور سود مند قراردینے،افغان باڈر کھولنے اور سارک چیمبر کا معاملہ خوش اسلوبی سے حل کرانے پر بزنسمین پینل کے راہنماؤں نے میاں انجم نثار کو خراج تھسین پیش کیا۔ بزنسمین پینل کے قاعدین نے  فیڈریشن پاکستان چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹری میں مخالف جماعت یونائیٹڈ بزنس گروپ (یو بی جی) کے ساتھ مذاکراتی کمیٹی اور ایف پی سی سی آ ئی کا ہیڈ آفس کراچی سے اسلام آباد منتقل کرنے کے متعلق تفصیلی غور ہوا۔ اس موقع پر چاروں صوبوں نے چیمبرز اور ایسوسی ایشنز سے رابطہ کر کے ان کی مشکلات  کے ازالہ کے لئے مطلوبہ علاقوں کے دوروں کی بھی منظوری اورایف پی سی سی آئی کے سالانہ انتخابات برائے2021 کیلئے حکمت عملی بھی وضع کی گئی۔ اس موقع پر پارلیمانی کمیٹی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بی ایم پی کے مرکزی چیئرمین انجم نثار نے کہا کہ صنعت و تجارت کی بہتری کے لئے کام کرتے رہیں گے۔ ایف پی سی سی آئی کے تشخص میں بہتری آئی ہے، تاجروں اور صنعتکاروں کے مسائل کے لئے ہر ممکن کوشیشیں کی جارہی ہیں۔انہوں نے کہ بزنسمین پینل نے دوسروں کی طرح جی حضوری کرنے کی بجائے حکومت کے ساتھ دلائل سے تاجر برادری کی خدمت کی ہے اور آئندہ بھی کریں گے۔

مزید :

کامرس -