"میری بیوی نے شادی کے ابتدائی دنوں میں ان دو شخصیات سے جنسی تعلقات قائم کرلیے تھے" معروف ادکار کا ہائیکورٹ میں بیان، جواب بھی آگیا

"میری بیوی نے شادی کے ابتدائی دنوں میں ان دو شخصیات سے جنسی تعلقات قائم کرلیے ...

  

لندن(ڈیلی پاکستان آن لائن)شوبز کی  بظاہر چمکتی دمکتی زندگی کے پیچھے دراصل کس قدر تاریکیاں اور بے راہ روی ہے اس بارے میں انکشافات ہوتے رہتے ہیں۔

ان دنوں لندن ہائی کورٹ میں ہالی ووڈ اداکار جونی ڈیپ اور ان کی اہلیہ ایمبر ہرڈ کے درمیان چلنے والا ایک کیس شوبز شخصیات کی اصل زندگی سےمتعلق کئی انکشافات کررہا ہے۔

جونی ڈیپ نے ہائیکورٹ میں بیان دیا ہے کہ ان کی سابق بیوی ایمبر ہرڈ نے شادی کے ابتدائی دنو٘ ں میں ہی کاریں اور سائنسی آلات بنانے والی نجی کمپنی ٹیسلا کے مالک ایلون مسک اور ایک ساتھی اداکار جیمز فرانکو سے ناجائز تعلقات استوار کرلیے تھے۔ 

گزشتہ روز ہونے والی سماعت میں اداکارہ امبر ہرڈ نے لندن  ہائی کورٹ میں اپنے سابق شوہر اداکار جونی ڈیپ کے الزامات کا جواب دیا۔ انہوں نے غیر ازدواجی تعلقات کے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے بیان دیا ہے کہ ان کے کبھی بھی ایلون مسک اور جیمز فرانکو سے ناجائز تعلقات نہیں رہے۔

خبر رساں ادارے رائٹرز کے مطابق امبر ہرڈ 21 جولائی کو بھی لندن کی ہائی کورٹ میں اپنا بیان ریکارڈ کروانے کے لیے پیش ہوئیں، جہاں انہوں نے خود پر غیر محرم مرد حضرات سے ناجائز تعلقات کو مسترد کیا۔

امبر ہرڈ نے عدالت کو بتایا کہ وہ 2015 تو کیا 2016 میں بھی ایلون مسک سے نہیں ملی تھیں اور یہ کہ ان کے کبھی بھی ساتھی اداکار جیمز فرانکو سے ناجائز تعلقات نہیں رہے۔

دوران سماعت جونی ڈیپ کے وکلا نے عدالت میں امبر ہرڈ اور ایلون مسک کے درمیان موبائل پیغامات کے ذریعے ہونے والے روابط کے ثبوت بھی پیش کیے۔

جب کہ جونی ڈیپ کے وکلا نے سی سی ٹی وی فوٹیج بھی پیش کیے، جن میں امبر ہرڈ کو رات دیر گئے ساتھی اداکار جیمز فرانکو کے ساتھ گھر سے بابر نکلتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔

امبر ہرڈ نے تسلیم کیا کہ ویڈیو میں نظر آنے والا شخص جیمز فرانکو ہی ہے مگر ان کے درمیان ناجائز تعلقات نہیں رہے۔

ڈان نیوز کے مطابق اس سے قبل اسی کیس میں ایلون مسک کے فلیٹ کی عمارت کے چوکیدار نے عدالت کو بتایا تھا کہ انہوں نے متعدد بار امبر ہرڈ کو ارب پتی شخص کے گھر رات کو آتے جاتے دیکھا۔

دوران سماعت عدالت کو آگاہی دی گئی کہ 2016 میں جب امبر ہرڈ نے اپنے شوبر جونی ڈیپ پر تشدد کا الزام لگایا، اس کے اگلے ہی دن ایلون مسک نے انہیں موبائل پیغام بھیجا کہ وہ ان کے لیے 24 گھنٹے کی سخت سیکیورٹی کا انتظام کر سکتے ہیں۔

تاہم امبر ہرڈ نے دوران سماعت ایلون مسک اور جیمز فرانکو سے جونی ڈیپ سے شادی کے وقت ناجائز تعلقات کے الزامات کو مسترد کیا۔

مذکورہ کیس میں 20 جولائی کو امبر ہرڈ نے عدالت کو بتایا تھا کہ انہیں سابق شوہر قتل اور دوسرے مرد حضرات سے ’ریپ‘ کروانے کی دھمکیاں بھی دیتے رہے ہیں۔

امبر ہرڈ نے عدالت کو بتایا تھا کہ متعدد بار جونی ڈیپ نے انہیں اس قدر شدید تشدد کا نشانہ بنایا کہ انہیں لگتا تھا کہ وہ مر جائیں گی۔

لندن ہائی کورٹ میں زیر سماعت مذکورہ کیس اگرچہ براہ راست امبر ہرڈ اور جونی ڈیپ کے درمیان نہیں ہے، تاہم اس کیس کا مرکزی نقطہ دونوں کے تعلقات، شادی اور دونوں میں تشدد کی وجہ سے طلاق ہیں۔

یہ کیس جونی ڈیپ کی جانب سے برطانوی اخبار دی سن کے خلاف 2018 میں دائر کیا گیا تھا۔

اداکار نے اپریل 2018 میں برطانوی اخبار 'دی سن‘ کے خلاف جھوٹا مضمون لکھنے پر لندن کی عدالت میں مقدمہ دائر کیا تھا۔

مزید :

تفریح -