بچوں سے جنسی زیادتی کے واقعات پولستانی کلیسا نے معافی مانگ لی

بچوں سے جنسی زیادتی کے واقعات پولستانی کلیسا نے معافی مانگ لی

وارسا(آن لائن)یورپی ملک پولینڈ کے طاقتور کیتھولک چرچ نے کلیسائی اہلکاروں کی طرف سے بچوں سے جنسی زیادتی کے واقعات پر ایک بڑی تقریب میں کھل کر معافی مانگ لی۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق کراکاو¿ کے شہر میں منعقدہ ایک غیر معمولی تقریب میں اس معافی کے موقع پر پولستانی کلیسا کے اعلیٰ ترین اہلکار اور جنسی زیادتیوں کا نشانہ بننے والے کئی افراد بھی موجود تھے۔ اس موقع پر بشپ لِبیرا نے کہا کہ وہ شرمندگی کے ساتھ خدا سے اور پادریوں کی زیادتیوں کا نشانہ بننے والے افراد سے معافی کی درخواست کرتے ہیں۔ اکثریتی طور پر کیتھولک آبادی والے ملک پولینڈ میں کلیسائی شخصیات کی طرف سے بچوں سے جنسی زیادتیوں کے واقعات طویل عرصے تک ایک ممنوعہ موضوع رہے ہیں۔

 یہ تقریب ایک ایسی دو روزہ کانفرنس کا حصہ تھی، جس کا مقصد کلیسائی شخصیات کی طرف سے جنسی زیادتیوں کے واقعات کی روک تھام تھا۔

مزید : عالمی منظر


loading...