کاشتکار ٹینڈہ کی پچھیتی فصل کی کاشت جولائی تک مکمل کر لیں‘محکمہ زراعت

کاشتکار ٹینڈہ کی پچھیتی فصل کی کاشت جولائی تک مکمل کر لیں‘محکمہ زراعت

ملتان(اے پی پی) نظامت زرعی اطلاعات ملتان کے ترجمان کے مطابق ٹینڈہ موسم گرما کی ایک اہم سبزی ہے اور اس کی کاشت کےلئے گرم و خشک موسم موزوں رہتا ہے۔ ٹینڈہ کی پچھیتی فصل کی کاشت جون کے آخری ہفتہ سے جولائی تک مکمل کر لیں۔ کاشت کےلئے زرخیز ریتلی زمین جس میں پانی کا نکاس اچھا ہو ، کا انتخاب کریں۔ کاشت سے ایک ماہ پہلے کھیت میں 15-10 ٹن گوبر کی گلی سڑی کھاد ڈالیں اور ہل چلا کر زمین میں اچھی طرح ملا دیں اس کے بعد کھیت کو پانی لگا دیں۔

 وتر آنے پر 3-2 مرتبہ ہل اور سہاگہ چلائیں۔ کاشت کےلئے 3 میٹر کے فاصلہ پر نشان لگائیں اور نشان کے دونوں طرف 30 سینٹی میٹر دور 3 بوری سپر فاسفیٹ اور 1 بوری امونیم سلفیٹ ملا کر ڈالیں۔ نشان سے مٹی اٹھا کرپٹڑیاں اس طرح بنائیں کہ مصنوعی کھاد مٹی کی 10-8 سینٹی میٹر تہہ کے نیچے آ جائے۔ ایک ایکڑ کاشت کرنے کےلئے 1.75-1.25 کلوگرام بیج استعمال کریں۔ پٹڑیوں کے دونوںکناروں پر آدھا میٹر پر 3-2 بیج دو، تین سینٹی میٹر گہرے بوئیں اور آبپاشی کر دیں۔ جب پودے 8-5 سینٹی میٹر اونچے ہو جائیں تو ہر جگہ ایک صحتمند پودا چھوڑ کر فالتو پودے نکال دیں۔ جڑی بوٹیوں کی تلفی کےلئے فصل کی 3-2 مرتبہ گوڈی کریں اور پودوں کو مٹی چڑھائیں۔ جب پھل لگنا شروع ہو تو 60 کلوگرام امونیم نائٹریٹ اور 30 کلوگرام یوریا کھاد فی ایکڑ ڈالیں اور آبپاشی کریں۔ ٹینڈہ کی ہر 4-3 چنائیوں کے بعد 40 کلوگرام امونیم نائٹریٹ یا 20 کلوگرام یوریا کھاد فی ایکڑ استعمال کرنے سے پیداوار میں خاطر خواہ اضافہ ہوتا ہے۔

مزید : کامرس


loading...