رنجیت سنگھ کی برسی میں شرکت کیلئے 344سکھ یاتریوں کی ٹرین کے ذریعے لاہور آمد

رنجیت سنگھ کی برسی میں شرکت کیلئے 344سکھ یاتریوں کی ٹرین کے ذریعے لاہور آمد

لاہو(اے پی پی) مہا راجہ رنجیت سنگھ کی 175ویں برسی کی تقریبات میں شرکت کیلئے ہفتہ کے روز 344سکھ یاتری خصوصی ٹرین کے ذریعے پاکستان پہنچ گئے واہگہ ریلوے اسٹیشن پر ایڈیشنل سیکرٹری شرائنز خالد علی سمیت متروکہ وقف املاک بورڈ کے افسران اور سکھ رہنما ؤں نے انکا استقبال کیااس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سکھ یاتریوں کے جتھہ لیڈر سردار گرمیت سنگھ نے کہا کہ وہ حکومت پاکستان اور متروکہ وقف املاک بورڈ کے مشکور ہیں جنہوں نے ان کی آمد کے موقع پر بہترین انتظامات کئے جس طرح دونوں ممالک کے عوام ایک دوسرے کو پسند کرتے ہیں اسی طرح دونوں حکومتوں کو بھی ایسے اقدامات کرنے چاہئیں جن سے دونوں ممالک کے عوام کو ایک دوسرے کے قریب ہونے کا موقع ملے ایڈیشنل سیکرٹری شرائنزخالد علی نے اس موقع پر میڈیا کو بتایا کہ سکھ یاتریوں کی رہائش ، سیکیورٹی اور بہترین سفری سہولیات سمیت دیگر تما م ضروری انتظامات کئے گئے ہیں سکھ یاتری خصوصی ٹرینوں کے ذریعے واہگہ ریلوے اسٹیشن سے گوردوارہ جنم استھان ننکانہ صاحب روانہ ہو گئے جہاں وہ اپنی مذہبی رسومات ادا کرنے کے بعد آج 22جون کوگوردوارہ سچا سودا فاروق آبادجائیں گے اور واپس ننکانہ صاحب آ جائیں گے سکھ یاتری 23جون کو گورد وارہ پنجہ صاحب حسن ابدال کا دورہ کرینگے اور 25جون تک وہاں قیام کریں گے اور اپنی مذہبی رسومات ادا کریں گے سکھ یاتری 26جون کوحسن ابدال سے گورد وارہ ڈیرہ صاحب لاہور آئیں گے اور5 28جون کو گوردوارہ روہڑی صاحب ایمن آباد گوجرانوالہ جائیں گے،29جون کوڈیرہ صاحب میں بھوگ اکھنڈ پاٹھ کی رسم ادا کی جائے گی ، سکھ یاتری یہاں اپنی دیگرمذہبی رسومات ادا کریں گے او ر سکھ یاتری اپنی یاترا مکمل کر کے 30جون کو واپس بھارت چلے جائیں گے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...