عراق سیاسی حل تلاش کرے : اوباما، داعش کے مقابلے کیلئے مہدی آرمی میدان میں آگئی

عراق سیاسی حل تلاش کرے : اوباما، داعش کے مقابلے کیلئے مہدی آرمی میدان میں ...
عراق سیاسی حل تلاش کرے : اوباما، داعش کے مقابلے کیلئے مہدی آرمی میدان میں آگئی

  


بغداد، واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی صدر باراک اوباما نے عراق کی سیاسی قیادت سے کہا ہے کہ وہ ملک سے عسکریت پسندی کے خاتمے کا سیاسی حل تلاش کریں، دوسری جانب عراق کے دارالحکومت بغداد میں مقتدیٰ الصدر کے اعلان پر شیعہ ملیشیا کی بڑی تعداد نے سڑکوں پر پریڈ کی۔ تفصیلات کے مطابق غیر ملکی میڈیا کو انٹرویو دیتے ہوئے امریکی صدر نے کہا کہ عراق کے مسئلے کا کوئی فرجی حل نہیں ہے اور اس کیلئے عراق کی سیاسی قیادت کو مل بیٹھ کر سیاسی حل تلاش کرنا ہوگا، ہم نے عراق کو جمہوریت قائم کرنے کا ایک موقع دیا ہے۔ انہوں نے واضح کیا کہ امریکہ عراق کی جنگ میں دوبارہ شامل نہیں ہوگا۔دوسری جانب عراق کے شیعہ رہنما مقتدیٰ الصدر نے شیعہ ملیشیا سے کہا تھا کہ وہ بغداد کی سڑکوں پر عسکری قوت کا مظاہرہ کریں، نامہ نگاروں کا کہنا ہے کہ شیعہ ملیشیا کی جانب سے عسکری قوت کے مظاہرے کے بعد بغداد میں حکومت کے لئے کافی مشکل صورتحال پیدا ہوگئی ہے۔ واضح رہے کہ دولت اسلامی عراق و شام (داعش) نے عراق کے کئی شہروں پر کنٹرول حاصل کرلیا ہے۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق امکان ہے کہ امریکی وزیر خارجہ جان کیری جلد ہی عراق جائیں گے جہاں وہ ملک کے مختلف فرقوں کے درمیان تنا کم کرنے کے لئے اس بات پر زور دیں گے کہ عراقی کابینہ میں تمام فرقوں کو نمائندگی دی جائے۔

مزید : بین الاقوامی


loading...