ٹکٹوں کے فیصلوں پر نظرثانی کی جائے پی ٹی آئی کے ناراض رہنماؤں کا مطالبہ

ٹکٹوں کے فیصلوں پر نظرثانی کی جائے پی ٹی آئی کے ناراض رہنماؤں کا مطالبہ

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) پاکستان تحریک انصاف کے ناراض رہنماؤں نے پی ٹی آئی کی جانب سے ٹکٹوں کی تقسیم کے حوالے سے بعض فیصلوں کو غیرمنصفانہ قرار دیا ہے جبکہ پی ٹی آئی کے پارلیمانی بورڈ میں شامل بعض افراد پر بھی اعتراضات اٹھائے گئے ہیں جبکہ ناراض رہنماؤں کی جانب سے شفاف پارلیمانی بورڈ تشکیل دے کر پارٹی ٹکٹوں پر نظرثانی کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ نجی ٹی وی کے مطابق تحریک انصاف کے ناراض رہنماؤں کا اجلاس اسلام آباد میں ہوا۔ اجلاس میں پنجاب اور خیبرپختونخوا سے پی ٹی آئی کے ناراض رہنماؤں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ پی ٹی آئی کے ناراض رہنماؤں نے پارٹی ٹکٹوں کی تقسیم کے حوالے سے چارٹر آف ڈیمانڈ پیش کر دیا ہے۔ ناراض رہنماؤں کی جانب سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ پی ٹی آئی کے پارلیمانی بورڈ میں بعض رہنما ایسے تھے جو سپریم کورٹ سے نااہل ہو چکے ہیں اور کچھ کے خلاف نیب میں کیسز چل رہے ہیں اور پارلیمانی بورڈ نے جن ٹکٹوں کے فیصلے کئے وہ غیرمنصفانہ ہیں۔ اعلامیہ میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ شفاف پارلیمانی بورڈ تشکیل دے کر ٹکٹوں کے فیصلوں پر نظرثانی کی جائے۔ اعلامیہ میں خواتین کی مخصوص نشستوں پر مرتب کردہ فہرست کو من پسند افراد پر مبنی قرار دیا گیا ہے۔ اعلامیہ میں کہا گیا ہے پنجاب میں اس قدر نااہلی رہی کہ اقلیتوں کی ترجیحی فہرست ہی نہیں کروائی جا سکی۔ مطالبہ کیا گیا ہے کہ پارٹی کے جن امیدواروں جنہوں نے 2013ء کا الیکشن لڑا نہیں دوبارہ ٹکٹ دے کر انتخابی میدان میں اتارا جائے جبکہ پارٹی چیئرمین اور وائس چیئرمین کے علاوہ جن جن کو بھی ایک سے زیادہ ٹکٹ دیئے گئے ہیں ان سے اضافی ٹکٹ واپس لئے جائیں۔

بورڈ

مزید :

صفحہ اول -