خیبر پختونخوا کی بیوو کریسی میں ’’جل تھل ‘‘ 177انتظامی افسران تبدیل کرنیکی منظوری

خیبر پختونخوا کی بیوو کریسی میں ’’جل تھل ‘‘ 177انتظامی افسران تبدیل کرنیکی ...

  

پشاور(صباح نیوز)خیبر پختونخوا کی نگراں حکومت نے صوبے کی بیوروکریسی اور محکمہ پولیس میں بڑے پیمانے پر اکھاڑ پچھاڑ کا فیصلہ کیا ہے۔ الیکشن سے قبل خیبرپختونخوا حکومت نے 177انتظامی افسران کو تبدیل کرنے کی منظوری دیدی ہے۔ صوبائی حکومت کی جانب سے جن ا فسر ا ن کو تبدیل کرنے کی منظوری دی گئی ہے ان میں20سیکرٹریز، 38 اسسٹنٹ کمشنر ڈائریکٹرز، 22 ایڈیشنل ڈپٹی کمشنرز، ڈپٹی سیکرٹریز، ڈپٹی ڈائریکٹرز، 5 آر پی اوز، 29 ایس پیز اور ڈی ایس پیز شامل ہیں، تاہم خیبرپختونخوا کے کسی افسر کی خدمات وفاق کو واپس نہیں کی گئیں ، تقرری و تبادلوں کے معاملہ پر نگراں وزیر اعلی خیبر پختونخوا دوست محمد کی زیر صدارت اجلاس منعقد ہوا جس میں چیف سیکرٹری نوید کا مر ان بلو چ اور انسپکٹرجنرل پولیس محمد طاہرو دیگر اعلی حکام نے شرکت کی۔اجلاس میں تبادلوں اور تقرری کیلئے افسران کی فہرست تیار کرکے الیکشن کمیشن ارسال کردی گئی۔ جلد ہی تبادلوں کا اعلامیہ جاری کردیا جائے گا۔واضح رہے نگراں حکومت نے وسیع پیمانے پر تقرر اور تبادلوں کی کوئی وجہ نہیں بتائی تاہم تجزیہ نگاروں کا کہنا ہے اس کا مقصد شفاف الیکشن کا انعقاد ہوسکتا ہے۔

کے پی تبادلے

مزید :

علاقائی -