ملتان میں مذہبی جماعتوں نے انتخابی امیدواروں کو میدان میں اتار دیا

ملتان میں مذہبی جماعتوں نے انتخابی امیدواروں کو میدان میں اتار دیا

  

ملتان(سٹی رپورٹر)مذہبی جماعتوں نے انتخابی امیدواران کو حتمی طور پر میدان میں اتار دیا ہے ، مذہبی جماعتوں کے بعض امیدواران مختلف مد مقابل امیدواروں کو ٹف ٹائم دینگے(بقیہ نمبر36صفحہ12پر )

،اس بار مذہبی امیدواروں کی بھی ایک خاطر خواہ تعداد میدان میں ہے جس سے مذہبی ووٹ سیاسی جماعتوں کو نہ ملنے کے امکانات یقینی ہیں ، ایم ایم اے میں شامل تمام مذہبی جماعتوں کو متفقہ طور پر نمائندگی اور ٹکٹ دیئے گئے ہیں ، جس سے سیاسی جماعتیں بھی پریشان ہیں ، اسی طرح تحریک لبیک ، ملی مسلم لیگ ، تحریک اللہ اکبر بھی میدان میں ہیں ، کئی مذہبی رہنما آزاد حیثیت سے بھی الیکشن لڑ رہے ہیں ۔این اے 155 میں تحریک لیبیک کی طرف سے ایوب مغل لڑرہے ہیں ، مذہبی حلقوں میں یہ خاصے مقبول ہیں ، این اے 156میں ملی مسلم لیگ کے چوہدری عبداللہ میو بھی خاصے موثر امیدوارہیں ، یہاں ملی مسلم لیگ کاخاصا ووٹ بینک موجود ہے عبداللہ میو گزشتہ الیکشن میں آزاد کھڑے ہوئے تھے تاہم پیپلز پارٹی کے حق میں دستبردار ہوگئے تھے ، اب وہ اپنی کمپین منظم انداز میں چلا رہے ہیں ،پی پی 215 میں ایم ایم اے کی طرف سے مولانا عبدالرحیم گجر کو کنفرم کردیا گیا ہے ، یہ حلقہ مذہبی ووٹ کے حوالے سے اہمیت کاحامل ہے گزشتہ انتخابات میں جماعت اسلامی کے ڈاکٹر حفیظ انور نے 5 ہزار سے زائد ووٹ حاصل کیئے تھے ، عبدالرحیم گجر کا تعلق مرکزی جمعیت اہل حدیث سے ہے یہاں مرکزی جمعیت اہل حدیث کے 25 کے قریب یونٹ مساجد کی سطح پر موجود ہیں جو کہ خاصا ووٹ بینک ہے اوردیگر جماعتیں بھی عبدالرحیم گجر کے ساتھ ہیں ، مذہبی ووٹ کے حوالے سے رشید آباد ، سمیجہ آباد ، فرخ ٹاون ،ودیگر علاقہ جات اہم ہیں ، یہان کا وو ٹ بینک گیم چینجر کی حیثیت کا حامل ہے ،پی پی 217 اور 216 سے ملی مسلم لیگ کے امیدوار عبدالاحد بھٹہ ہیں وہ بھٹہ برادری میں اچھا خاصا اثر ورسوخ رکھتے ہیں اسلیئے وہ پر عزم ہیں کہ مخالفین کو ٹف ٹائم دینگے ۔این اے 155سے شیخ جمشید حیات اچھی شہرت کے حامل جماعت اسلامی رہنمااور ایم ایم اے کے موثر کینیڈیٹ ہیں ۔پی پی 213 سے ڈاکٹر صفدر اقبال ہاشمی بھی وسیع ترین حلقہ احباب کے حامل ہیں ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -