مظفرآباد،اوباش نوجوانوں کا شراب پی کرغل غپاڑہ،شہری پریشان

مظفرآباد،اوباش نوجوانوں کا شراب پی کرغل غپاڑہ،شہری پریشان

  

مظفرآباد(بیورورپورٹ)بدھ اور جمعرات کی درمیانی شب دارالحکومت میں اوباش نوجوانوں کے گینگ نے شہر کے مختلف علاقوں میں شراب کے نشے میں غل غپاڑ اور تشدد کے واقعات سے شہریوں کو اذیت میں مبتلاء کردیا۔سٹی پولیس کی کامیاب کارروائی ،144نامی غنڈہ گینگ کے سربراہ راجہ عبید عرف بیدی ،راجہ وقار ترک عرف وکی بوس ،نیاز ترک ،حسیب اور شعیب جاوید کو گرفتار کر کے شراب نوشی ،غل غپاڑ ،توڑ پھوڑ،پولیس پارٹی پر حملے اور ان کے ساتھ مزاحمت ،شہریوں کو زخمی کرنے کے الزامات میں پانچ مقدمات درج کرکے حوالات بند کردیا۔واقعات کے مطابق جمعرات کی شب شہر کے اوباش نوجوانوں کے ایک اوباش ٹولے نے رات ایک بجے کے قریب آغا جی ہوٹل کے شیشے توڑ ڈالے یہاں سے فرار ہونے کے بعد پیلس ہوٹل تانگہ اسٹینڈ کے شیشے توڑے اور ملازمین پر خنجروں سے وار کیے اس دوران بینک روڈ سے پولیس غائب رہی اوباش نوجوان جن کے پاس گاڑیاں اور موٹر سائیکل موجود تھے نے خواجہ محلہ ،محلہ شاہناڑہ میں مختلف شہریوں کے گھروں کے دروازوں پر لاتوں اور گھونسوں سے زوردار وار کیے اور شہری نصف رات کے بعد جاگ اٹھے اور صبح تک رات جاگ کر گزاری ۔پولیس کو بروقت اطلاع دی گئی مگر گروہ وہاں سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگیا۔بعدازاں گروپ نے اپر اڈہ میں پولیس پارٹی پر حملہ کردیا دوپولیس اہلکار زخمی کرنے کے بعد محلہ برادری پر حملہ کیا جہاں پر تصادم کے نتیجے میں چھ افراد زخمی ہوئے۔پولیس نے آپریشن کے نتیجے میں پانچ ملزمان کو گرفتار کرلیا ہے جن کا تعلق ایک خود ساختہ گینگ 144سے بتایا جارہا ہے جنہیں سٹی تھانہ کے حوالات میں بند کر کے مختلف جرائم کے تحت پانچ مقدمات درج کرلیے ہیں۔سٹی تھانہ کے ایس ایچ او شجاع گیلانی نے میڈیا کو بتایا کہ ملزمان سے کوئی رعایت نہیں برتی جائے گی۔ملزمان کے چالان آج عدالت میں پیش کیے جائیں گے۔انہوں نے عوام الناس سے اپیل کی کہ وہ اپنے بچوں کی اچھی تربیت کریں اور رات گئے تک انہیں گھر سے باہر رہنے پر سرزنش کریں۔ایک دوسری کارروائی میں سٹی پولیس نے تانگہ اسٹینڈ میں کارروائی کرتے ہوئے 25بوتل ولائتی شراب برآمد کرلی ملزم گلفام کو گرفتار کر کے مقدمہ درج کردیا گیا ہے

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -