چھٹی کلاس کی بچی کو پیٹ میں درد، ڈاکٹر کے پاس لے جایا گیا تو 5 ماہ کی حاملہ نکلی، کون زیادتی کرتا رہا؟

چھٹی کلاس کی بچی کو پیٹ میں درد، ڈاکٹر کے پاس لے جایا گیا تو 5 ماہ کی حاملہ ...
چھٹی کلاس کی بچی کو پیٹ میں درد، ڈاکٹر کے پاس لے جایا گیا تو 5 ماہ کی حاملہ نکلی، کون زیادتی کرتا رہا؟

  


بھوپال (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست مدھیہ پردیش میں چھٹی کلاس کی بچی کو پیٹ میں درد پر ہسپتال لے جایا گیا جہاں ڈاکٹرز نے بچی کے حاملہ ہونے کا انکشاف کیا تو گھر والوں پر قیامت ٹوٹ پڑی۔

بھارتی میڈیا کے مطابق جمعرات کی صبح ریاست مدھیہ پردیش کے دارالحکومت بھوپال میں 13 سالہ بچی کو پیٹ میں درد کی شکایت پر ہسپتال لے جایا گیا ۔ ڈاکٹرز نے چیک اپ کیا تو انکشاف ہوا کہ بچی 5 ماہ کی حاملہ ہے۔ ڈاکٹرز کے اس انکشاف پر والدین کے پاﺅں تلے سے زمین ہی نکل گئی۔

بچی کی ماں کے پوچھنے پر اس نے بتایا کہ ان کے محلے میں رہنے والا 45 سالہ شخص شیو راج یادو اسے دسمبر 2018 سے مسلسل زیادتی کا نشانہ بنارہا ہے۔ بچی کے انکشاف پر پولیس نے مقدمہ درج کرکے ملزم کو گرفتار کرلیا ہے۔

پولیس کے مطابق ملزم شیوراج اسی محلے میں اپنی بیوی، بہو اور تین بیٹوں کے ساتھ رہتا ہے۔ ملزم مونگ پھلی کا ٹھیلہ لگاتا ہے، پہلی بار اس نے بچی کو مونگ پھلی دینے کے بہانے اپنے گھر کے اندر بلا کر اس کے ساتھ زیادتی کی ، ملزم نے بچی کو ڈرا دھمکا کر اس حرکت کے بارے میں کسی کو بتانے سے باز رکھا۔

مزید : انسانی حقوق