افغانستان سے تجارت کیلئے غلام خان کراسنگ پوائنٹ بھی آج کھل گیا

  افغانستان سے تجارت کیلئے غلام خان کراسنگ پوائنٹ بھی آج کھل گیا

  

اسلام آباد (آئی این پی) پاکستان افغانستان کے ساتھ دوطرفہ تجارت کیلئے غلام خان کراسنگ پوائنٹ (آج) پیر سے کھولے گا۔ دفترخارجہ کی ترجمان کی جانب سے جاری ایک بیان کے مطابق یہ فیصلہ افغان حکومت کی دوبارہ درخواست پر برادرانہ تعلقات کے تناظر میں کیا گیا۔پاکستان نے افغانستان کے لئے سامان اور برآمدات کی نقل و حمل کے لئے طورخم اور چمن کے سرحدی راستے پہلے ہی کھول رکھے ہیں۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ غلام خان کراسنگ پوائنٹ ہفتے میں چھ روز کھلا رہے گا اور ہفتے دن پیدل آنے جانے والوں کے لئے مختص ہو گا اور کورونا وائرس کی وباء کے تناظر میں سرحدی پوائنٹ پر قواعد و ضوابط کی پابندی پر عمل درآمد کیاجائے گا۔بیان میں کہا گیا کہ اس اقدام سے افغانستان کی مدد اور اسے تجارتی سہولت کی فراہمی سے متعلق پاکستان کے عزم کی عکاسی ہوتی ہے کیونکہ پاکستان افغانستان کا ایک بڑا تجارتی شراکت دار اور افغان برآمدات کی سب سے بڑی منڈی ہے۔افغانستان کی برآمدات اور درآمدات کے لئے گوادر کی بندرگاہ کھولنے سے دونوں ملکوں کے درمیان تجارتی روابط مزید مستحکم ہوئے ہیں۔بیان میں مزید کہا گیا کہ پاکستان ایک پرامن اور اقتصادی لحاظ سے مستحکم افغانستان کی حمایت جاری رکھے گا۔

افغانستان سے تجارت

مزید :

صفحہ اول -