دھان کے کیڑے مکوڑے اور ان کا انسداد

دھان کے کیڑے مکوڑے اور ان کا انسداد

  

لاہور(پ ر)کیڑے مکوڑے،دھان کی اہم کیڑوں میں پتہ لپیٹ سنڈی،گڑوویں اور تیلہ وغیرہ شامل ہیں چند عشرے پہلے گڑوویں (Borers)زیادہ اہم تھے لیکن آج کل پتہ لپیٹ سنڈی سب سے زیادہ اہمیت اختیار کرچکی ہے حالیہ سالوں کے دوران امریکن سنڈی کا حملہ بھی دیکھنے میں آیا ہے پتہ لپیٹ سنڈی، کڑے کی سنڈیاں دھان کے پتوں کے کناروں کو لیس دار جالے سے جوڑ کر اندر ہی اندر چھپ کر سبز مادہ کھاتی ہیں اس کے پروانے کا رنگ زردی مائل سفید ہوتا ہے جو دھان کی زیادہ اچھی اور گھنی فصل میں اکا دکا پروانے نظر آنے پر ہی ڈال دی جائے تو سپرے کرنے کی ضرورت نہیں رہتی کیڑا گرم مرطوب موسم اور سایہ دار مقامات میں زیادہ پرورش پاتا ہے اگست سے لیکر ستمبر کے آخر تک نقصان پہنچاتا ہے اگست کی بارش کے بعد زیادہ نمی درجہ حرارت برقرار رہے تو شدید حملہ ہو سکتا ہے گوبھ سے پہلے پہلے بری طرح حملہ شدہ فصل جلی ہوئی نظر آتی ہے ایسی فصل کا سٹہ مشکل سے باہر نکلتا ہے،سٹے پر بہت کم دانے بنتے ہیں مونجی کی پیداوار پچاس فیصد تک کم ہو جاتی ہے،انسداد، اگر فصل بروقت کاشت کر کے بروقت کھادیں ڈال دی جائیں تو اس کا حملہ کم ہوتا ہے،مونجی کاشت کرنے کے بعد پہلے چالیس دن کے اندر اندر ساری کھادیں ڈال کر فارغ ہو جانا چاہیے،دھان کو یوریا کھاد زیادہ تاخیر سے ڈالی جائے تو اس کا حملہ شدید ہو سکتا ہے،زیادہ ہری بھری اور گھنی فصل پر اس کا حملہ زیادہ شدت کے ساتھ ہوتا ہے،کھیت کو جڑی بوٹیوں سے پاک رکھا جائے،اگر اگست ستمبر کے دوران بارشیں ہوتی رہیں تو اس کا شدید حملہ نہیں ہو سکتا،باقاعدگی سے کھیت کا معائنہ کرتے رہنا چاہیے،اس سے بچاؤ کا بہتر طریقہ یہ ہے کہ منتقلی کے بعد دو مرتبہ دانے دار زہر کار ٹیپ یا پاڈان ڈالی جائے،ایک مرتبہ 45دن بعد اور دوسری مرتبہ 60تا65دن بعد کھڑے پانی میں چھٹہ کی جائے،یہ زہر 4تا5دن بعد اثر برقرار رہتا ہے،دانے دار زہر کا چھٹہ کرنے کی بجائے ریجنٹ 45گرام فی ایکڑ کے حساب سے آبپاشی کے ساتھ فلڈ کی جاسکتی ہے،تیلہ یا ہاپر،سپر باسمتی پر سٹہ نکلنے سے لے کر دانے پکنے کے دوران سفید پشت تیلہ حملہ آور ہوتا ہے آج کل سٹے نکلنے کے دوران براؤن پشت تیلہ Nilaparvata Iugensبھی نقصان پہنچانے لگ گیا ہے جو کونفیڈار اور ایکٹارا سے تلف نہیں ہوتا،براؤن پشت تیلے کے لیے مونجریں نکلنے کے بعد پہلا سپرے 80گرام پلینم اور پہلے سپرے کے 2تا 3ہفتے کے بعد سفید پشت تیلے کے لیے کونفیڈار 200ملی لٹر یا ایکٹارا 24گرام فی ایکڑ سپرے کی جا سکتی ہے۔

مزید :

کامرس -