کرونا سے شہری جاں بحق، تدفین پر علاقے میں ہنگامہ، نوجوانوں نے ڈنڈے نکال لئے، ورثاء کودھمکیاں، میت دوسرے قبرستان لے جانے کا حکم

  کرونا سے شہری جاں بحق، تدفین پر علاقے میں ہنگامہ، نوجوانوں نے ڈنڈے نکال ...

  

سمہ سٹہ(نامہ نگار)کوروناوائرس سے مرنے والے شخص کو آبائی قبرستان خانقاہ شریف میں شہریوں نے تدفین نہ ہونے دی اگر یہاں دفن کیا گیا تو وباء خانقاہ شریف میں پھیل جائے گئی میت کو دوسرے قبر ستان اشرف شوگر ملز کے قریب تدفین کی گئی تفصیل مطابق خانقاہ شریف کے رہائشی مصنف و دانشور محمد ظفر حید ر کے بھائی پٹواری محمد اصغر حیدر جو احمد پو ر شرقیہ کے رہائشی تھے چند روز قبل کورونا ٹیسٹ پازٹیو آنے پر سول ہسپتال بہاولپور (بقیہ نمبر15صفحہ6پر)

میں داخل تھے کورونا کی وجہ وفات پاگئے تو ان کی میت کو پولیس کی نگرانی آبائی قبرستان دربار حضر ت خواجہ محکم الدین سیرانی کے ساتھ والے قبرستان میں تدفین کرنے کے لیے میت ایمبولینس کے ذریعے لائی گئی ایمبولینس کو دیکھتے ہی اہل محلہ میں خوف ہراس پھیل گیا جھنوں نے احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ مرحوم احمد پور شرقیہ کے رہائشی ہیں اور کورونا وائر س کی وجہ سے ان وفات ہوئی ہے ہم یہاں ان کی تدفین نہیں کرنے دیں گے اس میت کو احمد پور شرقیہ میں ہی دفن کیا جائے کچھ نوجوان ڈنڈے لیکر کھڑے ہوگئے اور میت کو قبر ستان میں داخل نہ ہونے دیا اس موقع پر پینو نامی خاتون نے کہا کہ اس کورونا میت کی وجہ سے خانقاہ شریف کو تباہ نہیں ہونے دیں گے چاہیں ہماری جان کیو ں چلی جائے بالا آخر لواحقین اور پولیس انتظامیہ میت کوواپس دوسرے قبرستان اشرف شوگر ملز کے قریب بال کشید ہ قبرستان میں تدفین کردی گئی ہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -