23جون:سرکاری ملازمین پنجاب اسمبلی کے باہراحتجاج کیلئے تیار

  23جون:سرکاری ملازمین پنجاب اسمبلی کے باہراحتجاج کیلئے تیار

  

ملتان (سپیشل رپورٹر)صوبائی اسمبلی کے سامنے ایپکا پنجاب ملازمین نے احتجاج اور بھوک ہڑتال کا اعلان کردیاحسان خان سدوزئی صوبائی چیئرمین ایپکا ایکسائز پنجاب کی صدارت میں اجلاس ہوا جس میں زبیر خان,رحمان غفیر,جنید خان, چوہدری ارشد, ملک اشتیاق عاشق,ساجد پنو,حنیف کھیڑا,عطا نیازی,زبیر ثاقب,نعمان شہزاد,جاوید بلوچ,ملک (بقیہ نمبر8صفحہ6پر)

ہاشم بھٹہ,محمد کاشف, اکبر خان,طاہر عباس,زمن خان,علی مراد,علی رضا,سلیم حسن,عبدالعزیز نے شرکت کی.انہوں نے حکومت پنجاب سے مطالبہ کیا ہے کہ سندھ حکومت نے تنخواہیں بڑھائیں جب تک پنجاب حکومت ہماری تنخواہیں نہیں بڑھاتی تو مرکزی صوبائی صدر پنجاب چوہدری ابو حریرہ کی ہدایت کے مطابق ہم بروز منگل 2020-06-23 صبح دس بجے صوبائی اسمبلی کے سامنے احتجاج بھی کریں گے, بازوؤں پر سیاہ پٹی باندھیں گے, سیاہ جھنڈے ساتھ لے کر جائیں گیاپنا احتجاج ریکارڈ کروائیں گے اور بھوک ہڑتالی کیمپ بھی صوبائی اسمبلی کے سامنے لگائیں گے. سوموار شام کو ہماری بسیں ملتان, ڈیرہ غازی خان اور بہاولپور سے ملازمین کو لے کر روانہ ہو جائیں گی اور پورے پنجاب سے ملازمین اس احتجاج میں شرکت کریں گے.باقی گروپوں کو بھی ہم نے مدعو کیا ہے.ہمارا یہ احتجاج اس وقت تک جاری رہے گا جب تک پنجاب حکومت ہماری تنخواہیں نہیں بڑھاتی. پنجاب حکومت نیسرکاری ملازمین کو مہنگاء کی چکی میں پسنے پر مجبور کر دیا ہے. ملازمین کے گھروں میں فاقے پڑنے لگے ہیں. سرکاری ملازمین کو احتجاج کرنے پر مجبور کر دیا ہے.

اعلان

مزید :

ملتان صفحہ آخر -