ٹھیکیدار کی بیوی نے اپنا ہی گھر لوٹ لیا، چوری کی سب سے انوکھی کہانی سامنے آگئی

ٹھیکیدار کی بیوی نے اپنا ہی گھر لوٹ لیا، چوری کی سب سے انوکھی کہانی سامنے آگئی
ٹھیکیدار کی بیوی نے اپنا ہی گھر لوٹ لیا، چوری کی سب سے انوکھی کہانی سامنے آگئی

  

ممبئی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارتی شہر ممبئی میں ایک ٹھیکیدار نے گھر میں چوری کی واردات کی رپورٹ درج کروائی اور جب پولیس نے تحقیقات کیں تو ایسا انکشاف ہوا کہ ٹھیکیدار کے وہم و گمان میں بھی نہیں تھا۔ ٹائمز آف انڈیا کے مطابق اس کے گھر میں 4لاکھ روپے کی چوری کی واردات کسی اور نے نہیں بلکہ خود اس کی بیوی نے ہی کی تھی۔ پولیس کے مطابق نوی ممبئی کے رہائشی اس شخص کی 49سالہ بیوی بیمار تھی۔ وہ اسے ہسپتال لے گیا اور ڈاکٹر کے دکھانے کے بعدا سے ہسپتال کے پاس ہی اپنے ایک انکل کے گھر چھوڑ دیا کیونکہ انہیں شام کو دوبارہ ڈاکٹر سے ملنا تھا۔

بیوی کو انکل کے گھر چھوڑ کر وہ خود کام پر چلا گیا۔ اس کے جانے کے بعد خاتون وہاں سے نکلی اور اپنے گھر جا کر 3لاکھ نقدی اور 1لاکھ سے زائد مالیت کے زیورات چوری لیے۔ اس نے گھر کی ایک کھڑکی توڑ ڈالی اور سامان ادھر ادھر بکھیر دیا تاکہ لگے کہ گھر میں چور آئے تھے۔ شام کو دوبارہ ڈاکٹر کو دکھانے کے بعد جب میاں بیوی گھر واپس آئے اور اندر داخل ہوئے تو ہر چیز تہہ و بالا تھی۔ ٹھیکیدار نے پولیس کو واردات کی اطلاع دی۔

پولیس نے سی سی ٹی وی فوٹیج دیکھی اور ہمسایوں سے پوچھ گچھ کی لیکن کوئی سراغ نہ ملا۔ پولیس والوں کو ٹھیکیدار کی بیوی کے بیان سے اس پر شک ہوا جس پر انہوں نے اس سے تفتیش کی۔ دوران تفتیش خاتون نے واردات کا اعتراف کر لیا۔ اس نے پولیس کو بتایا کہ اس پر بھاری قرض تھا جسے چکانے کے لیے اس نے یہ چوری کی۔ اس قرض کا اس کے شوہر کو علم نہیں تھا اور وہ اسے بتانا بھی نہیں چاہتی تھی۔ پولیس کے مطابق اس شخص نے اپنی بیوی کو بوقت ضرورت کام کے لیے گھر میں رکھنے کے لیے 3لاکھ روپے دیئے تھے، وہ بھی خاتون نے قرض کی ادائیگی میں دے دیئے، شوہر اس سے بھی لاعلم تھا۔ رپورٹ کے مطابق جب شوہر کو علم ہوا کہ واردات اس کی بیوی نے کی ہے تو اس نے اپنی ایف آئی آر واپس لے لی اور کہا کہ وہ یہ مقدمہ آگے نہیں بڑھانا چاہتا۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -بین الاقوامی -