پشاور زلمی نے کراچی کنگز کو گھر بھیج دیا، فائنل تک رسائی کیلئے آج اسلام آباد یونائیٹڈ سے پنجہ آزمائے گی 

پشاور زلمی نے کراچی کنگز کو گھر بھیج دیا، فائنل تک رسائی کیلئے آج اسلام آباد ...
پشاور زلمی نے کراچی کنگز کو گھر بھیج دیا، فائنل تک رسائی کیلئے آج اسلام آباد یونائیٹڈ سے پنجہ آزمائے گی 

  

ابو ظہبی ( ڈیلی پاکستان آن لائن ) پشاور زلمی نے انتہائی سنسنی خیز مقابلے کے بعد کراچی کنگز کو واپسی کی ٹکٹ کٹا دی . پشاور زلمی نے ٹاس جیت کر کراچی کنگز کو پہلے بلے بازی کی دعوت دی ،کراچی کی ٹیم مقررہ 20 اوورز میں 7 وکٹوں کے نقصان پر 175 رنز بنا سکی ، پشاور زلمی نے 176 رنز کا ہدف بیسویں اوور کی پانچویں گیند پر  پانچ وکٹوں کے نقصان پر حاصل کیا۔ 

پشاور زلمی کی جانب سے اننگز کا آغاز انتہائی محتاط انداز میں کیا گیا ، پہلے اوور میں7 رنز بنے ،دوسرے اوور میں حضرت اللہ نے پہلی گیند پر چھکا ، دوسری اور چھٹی گیند پر چوکے لگائے ،تیسرے اوور میں کامران اکمل نے تین گیندیں ضائع کیں اور چوتھی پر سنگل لی ، حضرت اللہ نے سامنے آکر پانچویں گیند پر پھر چھکا جڑ دیا ۔ اگلے اوور میں حضرت اللہ نے دوسری گیند پر چوکا اور چھٹی گیند پر چھکا لگا کر رن ریٹ کو مزید بڑھایا ۔

پانچویں اوور میں کامران اکمل نے بھی تیزی دکھائی اور پہلی دو گیندوں پر چوکے جڑے لیکن وہ چوتھی گیند پر کلین بولڈ ہو گئے ۔ چھٹے اوور میں حضرت اللہ نے ایک چوکا لگایا ، ساتویں اوور میں پھر سے حضرت اللہ کے ایک چھکے اور دو چوکوں نے پشاور زلمی کی پوزیشن کو مستحکم کیا ۔ آٹھویں اوور میں حضرت اللہ نے ایک چھکا اور ایک چوکا مار کر پریشر کراچی کنگز پر ڈال دیا۔ کراچی کنگز کے ارشد اقبال نے نواں اوور بہت زبردست کیا ، اس اوور میں کوئی باؤنڈری نہ لگی اور صرف پانچ رنز دیے ۔تھسارا پریرا کی جانب سے دسویں اوور میں بھی سکور کو روکا گیا ۔ اس اوور میں چار رنز بنے اور چھٹی گیند پر امام الحق آؤٹ ہو گئے ۔ دو اوورز میں سکور نہ بننے اور ایک وکٹ گرنے سے پشاور زلمی پر پریشر بڑھنے لگا مگر گیارہویں اوور میں حضرت اللہ نے دو چوکے لگا کر پریشر کو توڑا۔ بارہویں اوور میں تھسارا پریرا نے حضرت اللہ کو کیچ تھمانے پر مجبور کر دیا ، ان کا کیچ گپٹل نے پکڑا ۔

حضرت اللہ کے آؤٹ ہونے پر شعیب ملک میدان میں آئے اور اوور کی آخری گیند پر چوکا لگا یا، شعیب ملک نے اگلے اوور کی تیسری گیند پر بھی چوکا لگایا، سنگل ڈبل کے ساتھ تیرہویں اوور میں 10 سکور بنائے گئے ۔ چودھویں اوور میں بھی ایک چوکے اور سنگل ڈبل کے ذریعے 10سکور بنے ۔ پندرہویں اوور میں چار،سولہویں اوور میں 11،سترہویں اوور میں 11رنز بنے ۔ 

آخری تین اوورز میں 22 رنز چاہئے تھے ۔اٹھارہویں اوور میں آٹھ رنز بنے اور عثمان خالد کی وکٹ گری انیسویں اوور کی دوسری گیند پر شعیب ملک آؤٹ ہوئے ، چوتھی گیند پر ردرفورڈ نے چوکا لگایا۔ بیسویں اوور میں پشاور زلمی کو جیت کیلئے 7رنز چاہئے تھے ۔پہلی اور دوسری گیندوں پر سنگل بنیں ، تیسری گیند ڈاٹ بال رہی ، مگر چوتھی گیند پر ردرفورڈ نے چوکا لگا کر سکور برابر کر دیا۔ پانچویں گیند پر ردرفورڈ نے سنگل لے کر کراچی کنگز کو ایونٹ سے باہر نکال دیا۔

حضرت اللہ کو 38 گیندوں پر 5چھکوں اور 10چوکوں کی مدد سے 77رنز بنانے پر پلیئر آف دی میچ قرار دیا گیا۔

اس سے قبل کراچی کنگز نے مقررہ 20 اوورز میں 7 وکٹوں کے نقصان پر 175 رنز بنائے تھے ۔ کراچی کنگز کی جانب سے اننگز کا محتاط آغاز کیا گیا،رنز بنانے کا پریشر بڑھنے لگا تو شرجیل خان بڑی شارٹ کھیلتے ہوئے 20 گیندوں پر 26 رنز بناکر محمد عرفان کی گیند پر آؤٹ ہوئے،مارٹن گپٹل ایک دفعہ پھر ناکام رہے اور بغیر کوئی رنز بنائے عمید آصف کی گیند پر آؤٹ ہوئے۔دانش عزیز 12 گیندوں پر 13 رنز بناکر محمد عرفان کی گیند پر آؤٹ ہوئے۔

ایک طرف وکٹیں گرتی رہیں تو دوسری جانب سٹار بلے باز بابر اعظم نے رنز بنانے کا سلسلہ جاری رکھا،انہوں نے پی ایس ایل کے اس سیزن میں اپنی ساتویں ففٹی مکمل کی، وہ 45گیندوں  پر 53 رنز بناکر وہاب ریاض کی گیند پر آؤٹ ہوئے۔ان کی ففٹی میں چھ چوکے شامل تھے۔وکٹ کیپر بلے باز والٹن آٹھ گیندوں پر نو رنز بناکر وہاب ریاض کی گیند پر آؤٹ ہوئے۔کپتان عماد وسیم اور تھساراپریرا کی برق رفتار بلے بازی نے کراچی کنگز کو بڑا ٹارگٹ سیٹ کرنے میں مدد کی، تھسارا پریرا 18گیندوں  پر 37 رنز بناکر عمید آصف کی گیند پر آؤٹ ہوئے ان کی اننگز میں چار چوکے اور تین چھکے شامل تھے۔کپتان عماد وسیم نو گیندوں پر 16 رنز بناکر آؤٹ ہوئے انکی اننگز میں ایک چھکا اور ایک چوکا شامل تھا۔

انکی وکٹ محمد عمران نے حاصل کی۔محمدعامر سات اور محمد الیاس چار رنز بناکر ناٹ آؤٹ رہے۔کراچی کنگز کی ٹیم نے آخری پانچ اوورز میں 70 رنز بنائے۔

مزید :

کھیل -PSL -PSL News Update -