بینک الفلاح اوریوایس ایڈ کی جانب سے قرضوں کی سہولت

بینک الفلاح اوریوایس ایڈ کی جانب سے قرضوں کی سہولت

 کراچی(کنامک رپورٹر)امریکا پاکستان اشتراک برائے فراہمیِ قرض کے تحت بینک الفلاح نے حال ہی میںیونائیٹڈ اسٹیٹ ایجنسی فار انٹر نیشنل ڈیولپمنٹ (USAID) کے ساتھ اشتراک کیا ہے جس کے تحت پاکستان میں چھوٹے اور درمیانے اداروں (SME) کو مالیاتی سروسز فراہم کی جائیں گی۔یہ8 سالہ اشتراک کاروبار ی مالکان کو معاونت فراہم کرے گا، روزگار کے نئے مواقع پیدا ہوں گے اور ملک میں وسیع پیمانے پر معاشی ترقی عمل میں آئے گی۔ اس اشتراک کے تحت امریکا 10 ملیَن ڈالر فراہم کرے گا جو اشتراکی بینکوں کے ذریعے SMEs کو 60 ملیَن ڈالر مالیت کے قرضوں کی معاونت کریں گے۔پاکستان کی معاشی ترقی میں SME سیکٹر کا مرکزی کردار ہے۔ یہ شعبہ مجموعی ملکی پیداوار (GDP) کا 30 فیصد اور ملک میں مجموعی روزگار کا 70 فیصد فراہم کرتا ہے۔ اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے مطابق SMEs کو مناسب سہولیات اور سروسز حاصل کرنے میں بہت مشکلات کا سامنا ہے۔ اور اسے بینکنگ سیکٹر سے باقاعدہ قرضوں تک رسائی 10 فیصد سے بھی کم میسّر ہے۔ بینک الفلاح میں SMEs کے سربراہ جاوید اقبال نے اس اشتراک کے بارے میں اظہارِ خیال کرتے ہوئے کہا:’’بینک الفلاح صارفین کی مجموعی ضروریات پر توجہ مرکوز کرنے اور SME صارفین کی مالیاتی، غیر مالیاتی، لین دین اور سرمایہ کاری سے متعلق اور مشاورتی ضروریات کو پورا کرنے والے جامع بینکنگ حل فراہم کرتا ہے۔‘‘انہوں نے مزید کہا:’’بینک الفلاح بینکاری سروسز استعمال نہ کرنے والے عوام کو بھی مرکزی مالیاتی دھارے میں شامل کرنے کے لیے کوشاں ہے ۔‘‘بینک الفلاح SME ٹول کِٹ پیش کرنے والا پاکستان کا پہلا بینک ہے۔اس منفرد اور اپنی نوعیت کی واحد سہولت سے بینک پاکستان بھر میں SME صارفین کو کاروبار کی ترقی کے ذرائع فراہم کرتا ہے جس سے وہ وسیع تر معلومات پر مبنی بہتر فیصلے کرسکتے ہیں۔USAID نے بینک الفلاح، جے ایس بینک، خوشحالی بینک اور دی فرسٹ مائیکرو فنانس بینک کے ساتھ معاہدے کیے ہیں۔

مزید : کامرس