پسند کی شادی ، پریمی جوڑا جنگل میں زندگی گزارنے پر مجبور، جرگے کیخلاف پٹیشن دائر

پسند کی شادی ، پریمی جوڑا جنگل میں زندگی گزارنے پر مجبور، جرگے کیخلاف پٹیشن ...
پسند کی شادی ، پریمی جوڑا جنگل میں زندگی گزارنے پر مجبور، جرگے کیخلاف پٹیشن دائر

  

گھوٹکی (مانیٹرنگ ڈیسک) پسند کی شادی کرنیوالے جوڑے کو جرگے نے سزاسنادی اور عمل درآمد نہ ہونے پر قتل کا حکم دیدیاجس کے بعد ’جوڑا‘ جنگل میں زندگی بسر کرنے پر مجبور ہوگیا۔

تفصیلات کے مطابق پانچ ماہ قبل انتظار نے گیارہویں جماعت کی طالبہ نبیلہ سے پسند کی شادی کی تھی جس پر جرگہ ہواجس دوران نام نہاد جرگے نے جوڑے کو کاری قراردیتے ہوئے انتظار کو 12لاکھ جرمانہ اور ایک بچی ونی کرنے کاحکم دیا۔

سزاو جرمانہ کی عدم ادائیگی پر جرگے نے پریمی جوڑے کو قتل کرنے کا حکم دیا، لڑکے کے پاس رقم نہ ہونے کی وجہ سے میاں بیوی نے راہ فرار اختیار کی اور جنگل، ویرانوں میں چھپ کر زندگی گزارنے پر مجبور ہیں ۔

نبیلہ نے بتایاکہ اُس کی تعلیم مکمل ہوگئی تھی جس کے بعد شادی کی ۔

بتایاگیاہے کہ انسانی حقوق کی پامالی پر جرگے کے خلاف سیشن کوٹ گھوٹکی میں پٹیشن دائر کردی گئی جس کی سماعت پیر کو متوقع ہے ۔

مزید : انسانی حقوق /اہم خبریں