قومی ٹیم کی کپتانی کا فیصلہ ایک ہفتہ موخر ، صہیب مقصود نے کوئی خلاف ورزی نہیں کی : پی سی بی

قومی ٹیم کی کپتانی کا فیصلہ ایک ہفتہ موخر ، صہیب مقصود نے کوئی خلاف ورزی نہیں ...
قومی ٹیم کی کپتانی کا فیصلہ ایک ہفتہ موخر ، صہیب مقصود نے کوئی خلاف ورزی نہیں کی : پی سی بی

  

لاہور ( مانیٹرنگ ڈیسک ) پاکستان کرکٹ بورڈ نے قومی ٹیم کے نئے کپتان کا فیصلہ ایک ہفتے تک موخر کر دیا ہے۔تفصیلات کے مطابق ورلڈ کپ 2015 ءکے بعد قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان مصباح الحق نے ون ڈے کرکٹ سے ریٹائر ہونے کا اعلان کیا تھا جبکہ نئے کپتان کے لیے پی سی بی کا اجلاس آج منعقد کیا گیا ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ قومی ٹیم کے کپتان کے لیے فیصلہ ایک ہفتے میں کیا جائے گا جبکہ آئندہ ہونے والے اجلاس میں وہاب ریاض کو کپتان بنانے کی تجویز پر بھی غور کیا جائے گا۔ذرائع کا مزید کہنا تھا کہ آئندہ بننے والی سلیکشن کمیٹی میں معین خان کو کوئی ذمہ داری نہیں دی جائے گی جبکہ بگ بیش کھیلنے کے لیے کھلاڑیوں کو بورڈ کی جانب سے این او سی جاری کیا جائے گا۔

خوش قسمت انسان ہوں کہ وہاب کی باولنگ سے زخمی نہیں ہوا:شین واٹسن

ورلڈ کپ کوارٹر فائنل میں صہیب مقصود اور کپتان مصباح الحق کے ساتھ تکرار پر بھی ایکشن لینے کا فیصلہ کیا ہے جبکہ ذرائع کا کہنا ہے کہ صہیب مقصود اور مصباح الحق کی تکرار پی سی بی کی نظر میں کوڈ آف کنڈکٹ کی خلاف ورزی نہیں ہے۔پی سی بی ذرائع کا کہنا تھا کہ صہیب مقصود نے چھوٹے سائز کا ہیلمٹ ہونے کی وجہ سے مصباح الحق کی جانب سے ہیلمٹ پہننے سے انکار کیا تھا جبکہ مصباح الحق نے 3 گیندوں کے لیے فیلڈنگ کی۔ذرائع کا کہنا ہے کہ مصباح الحق کے بعد اپنے سائز کا ہیلمٹ آنے پر صہیب مقصود نے ہی ان کی جگہ فیلڈنگ کی تھی جس کی وجہ سے ان کو قصور وار نہیں سمجھا جا رہا ۔

مزید : کھیل