نجومیوں اور حکیموں کے اشتہارات پر پابندی کا فیصلہ،کیبل آپریٹرز کے خلاف کارروائی ہو گی

نجومیوں اور حکیموں کے اشتہارات پر پابندی کا فیصلہ،کیبل آپریٹرز کے خلاف ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور(جنرل رپورٹر)محکمہ بلدیات نے مختلف کیبلز پر چلنے والے حکماء،نجومیوں دشت شناسوں کے اشتہارات پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ کر لیا خلاف ورزی کے مرتکب کیبل آپریٹرز ،نجومیوں اور حکیموں کے خلاف کارروائی کیلئے ایکشن پلان تیار کر لیا گیا ،جس کے تحت جرمانے اور سزائیں ہونگی ،عملدرآمد کااختیار ضلعی انتظامیہ کے حوالے کیا جارہا ہے،جس کی تصدیق محکمہ بلدیات کے سیکرٹری اسلم کمبوہ نے کی ہے دریں اثناء اس حوالے سے صوبائی وزیر بلدیات و کمیونٹی ڈویلپمنٹ محمد منشاء اللہ بٹ نے محکمانہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ صوبہ بھر میں وال چاکنگ کرنے اور پوسٹرلگانے پر سختی سے عمل در آمد شروع کر دیا گیا ہے۔ اس سلسلے میں ٹیمیں تشکیل دے دی گئی ہیں جو اپنی موجودگی میں دیواروں پر لکھی ہوئی تحریروں کو وائٹ واش کے ذریعے صاف کریں گی جبکہ اشتہار تحریر کرانے والوں کے خلاف ایکشن لینے کے لئے بھی لسٹیں بنانے کے احکامات صادر کر دئیے گئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ایسے پلازے ،دکانیں اور دفاتر جنہوں نے مقامی انتظامیہ کی اجازت کے بغیر اشتہارات لگائے ہونگے کو بھی بھاری جرمانے اور سزائیں دی جائیں گی۔انہوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب کی گائیڈ لائن میں شہروں کی در و دیوار کو صاف ستھرا رکھنے کی پالیسی کو ہر مقام پر فوقیت دی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ کیبل اور دیگر ذرائع سے چلنے والے نجومیوں، حکیموں او ر سفلی علوم کے ماہرین بارے اشتہارات پر بھی ان کے خلاف سخت ایکشن لینے کی ہدایت کر دی گئی ہے۔اس سلسلے میں قانون نافذ کرنے والے اداروں کو بھی ایکشن لینے کا پابند کر دیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ جن علاقوں میں دیواروں سے اشتہارات کو وائٹ واش کیا جائے گا تشکیل ٹیمیں اور وہ خود وزٹ کریں گے اس بارے ہر ٹیم اپنی رپورٹ حکومت کو ارسال کرے گی۔ پنجاب لوکل گورنمنٹ ایکٹ 2013ء کی رو سے دیواروں پر کسی بھی قسم کا اشتہار لکھنا جرم ہے۔ جس پر 2000 روپے سے لے کر 25000روپے تک جرمانہ اور 6ماہ قیدکی سزا دی دی جا سکے گی۔انہوں نے کہا کہ اس مہم کو وسیع پیمانے پر اجاگر کرنے اور لوگوں میں شعور اجاگر کرنے کے لئے مقامی سطح پرالیکٹرانک و پرنٹ میڈیا کے ذریعے آگاہی فراہم کی جارہی ہے۔