این ایف سی ایوارڈ ،تاخیر کی صور ت میں محرومیوں اور مشکلات میں مزید اضافہ ہوگا:سکندر شیر پاؤ

این ایف سی ایوارڈ ،تاخیر کی صور ت میں محرومیوں اور مشکلات میں مزید اضافہ ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


پشاور( سٹاف رپورٹر )سینئر صوبائی وزیر اورقومی وطن پارٹی کے صوبائی چیئرمین سکندرحیات خان شیرپاؤ نے این ایف سی ایوارڈ کے جلد انعقاد کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس میں جتنی مزید تاخیر ہوگی چھوٹے صوبوں اورچھوٹی قومیتوں کی مشکلات اور محرومیوں میں مزید اضافہ ہو گا۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے گاؤں شیرپاؤ میں ایک شمولیتی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا اس موقع پر یونین کونسل مرزاڈھیر کے ممتاز سیاسی رہنماء میاں محمد شفیع نے اپنے ساتھیوں اور خاندانوں سمیت قومی وطن پارٹی میں شمولیت کا اعلان کرتے ہوئے پارٹی قائد آفتاب احمد خان شیرپاؤ اور سکندر حیات خان شیرپاؤ کی قیادت پر اپنے مکمل اعتماد کا اظہار کیا۔سکندر شیرپاؤنے کہا کہ قومی مالیاتی ایوارڈ میں تاخیر سے چھوٹے صوبوں کی مشکلات میں مزید اضافہ ہورہا ہے اوراس التواء کی وجہ سے صوبے کی معاشی اور اقتصادی بدحالی میں اضافہ ہو رہا ہے لہٰذا اس میں مزید تاخیر قابل برداشت نہیں۔ انھوں نے کہا کہ مردم شماری صحیح اورشفاف طریقے سے کرائی جائے جوکہ حقیقی معنوں میں عوام کے احساسات کی ترجمانی کرسکے۔انھوں نے کہا کہ پنسل کے ذریعے خانہ شماری اورگنتی قابل قبول نہیں ہے اوراس میں شکوک و شہبات پیدا ہونے کا اندیشہ ہے۔ انھوں نے کہا کہ ہم پختونوں کی آبادی اور حقوق کو کسی صورت بھی متاثر کرنے کی اجازت نہیں دیں گے۔انھوں نے مطالبہ کیا کہ مردم شماری کی گنتی مشین کو اسلام سے پشاور شفٹ کیا جائے ۔انھوں نے کہا کہ قومی وطن پارٹی پختونوں کی مشکلات کے خاتمے اورحقوق کے حصول کیلئے قومی اور بین الاقوامی فورم پر آواز اٹھائے گی اور اس سلسلے میں کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کیا جائے گا۔اس موقع پر قومی وطن پارٹی کے ضلعی رہنماء اور حلقہ پی کے21کی کابینہ کے اراکین بھی موجود تھے۔