سی پیک بیر ونی سر مایہ کا روں کیلئے تو جہ کا مر کز ہے‘ڈپٹی منسٹر چیک ری پبلک

سی پیک بیر ونی سر مایہ کا روں کیلئے تو جہ کا مر کز ہے‘ڈپٹی منسٹر چیک ری پبلک

  

کرا چی(اکنامک رپورٹر)بین الاقومی معیشت میں مو جود مو حولیات اور ما لیاتی تبدیلیو ں کی وجہ سے پاکستان اور چیک ری پبلک کے درمیان تجا رتی حجم کم ہو کر رہ گیا ہے اس با ت اظہار Ivan Jancarek Dyڈپٹی منسٹر چیک ری پبلک نے ایف پی سی سی آئی کے نائب صدر طا رق حلیم ایف پی سی سی آئی کے ممبران سے ایک ملا قا ت میں کیا جو فیڈریشن ہاؤ س میں ان کے دورہ کے موقع پر ہو ئی ۔ ڈپٹی منسٹر اپنے سفیر اور قو نصلر جنرل چیک ری پبلک کے ہمراہ تھے کہاکہ آپس میں با ہمی تجا رت توقع سے نیچے اور اس سے ٹر یڈ کا والیم 150ملین ڈالر 217ملین ڈالر کے مقا بلے میں کم ہو کر 92ملین ڈالر کم رہ گیا ہے اور پاکستانی برآمدت بھی 92ملین ڈالر سے کم ہو کر 57ملین ڈاکر تک رہ گیا ہے اور یہ چیز دو نو ں ممالک کی توقعات کے بر عکس ہے ۔ ڈپٹی منسٹر نے مزید کہاکہ دو نو ں ممالک کے در میان مضبو ط معا شی رشتہ کیلئے دو نوں ممالک کو ٹر یڈ کو پرآیشن اور امو ر خارجہ کے معاملا ت میں ایک معا ہد ہ پر دستخط کر نے ہو گئے ۔ انہوں نے اظہار کیا کہ پاکستان ایک مضبو ط ملک ہے جس کی آبادی 208ملین تک ہے اور حالیہ سی پیک کی وجہ سے بیر ونی سر مایہ کا روں کیلئے تو جہ کا مر کز ہے ۔ انہوں نے کہاکہ چیک ری پبلک ایکسپورٹ بینک اپنی سروس اور کوپرآیشن کا ستعمال جو ائنٹ وونیچر کیلئے قا ئم کر نے کے لیے استعمال کر نا چاہتا ہے انہوں نے پاکستان کی کلچرل اور سیا حت کی تا ریخ کو سراہا ۔ اس موقع پر ایف پی سی سی آئی کی نائب صدر طا رق حلیم نے چیک ری پبلک کے ڈپٹی منسٹر کو خو ش آمدید کر تے ہو ئے کہاکہ ایف پی سی سی آئی کی حالیہ سر گر میاں پاکستان کی سر مایہ کاری اور برآمدت کی صلا حیتوں پر مبنی ہے۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان اور چیک ری پبلک اچھے سیا سی تعلقا ت کے علاوہ گلوبل اکنامک ایشوز پر یکسا ں خیالا ت رکھتے ہیں مگر دو نو ں ممالک کے در میا ن با ہمی تجا رت سے اس کا فا ئدہ نہیں ہو رہا ہے ۔

فی الحال پاکستان چیک ری پبلک کو بیڈ لینن ، ٹیبل ٹو ائلٹ پیپر، کچن لینن ، کپڑ ے اور چمڑے کی مصنوعا ت ،Apparel، ہو زری کی مصنوعا ت ، چیک ری پبلک کو برآمدت کر تا ہے۔ جبکہ پاکستان چیک ری پبلک سے Steam Turbine, Vapor Turbine, Uncoated Kraft Paper, Paperboard, Radar Apparatus, Radio Indicates Lack, کی مصنوعات درآمد کر تا ہے۔ اس وجہ سے باہمی اشیا ء کے تبا دلہ والی تجا رت کو معلو مات نہ ہو نے کی وجہ سے دو نو ں ممالک کے در میان اکنا مک ، ٹر یڈ اور سر مایہ کا ری کی بھر پو ر صلا حیتو ں کا دو نو ں ممالک کو فا ئد ہ نہیں ہو رہا ہے۔ انہوں نے مز ید زور دیتے ہو ئے کہا کہ مسلسل وفد کا تبا دلہ ، دونوں ممالک کے ٹریڈ فیئرز میں با ہمی شر کت اور جو ائنٹ بز نس کو نسل کی میٹنگ ، دو نو ں چیمبرز آف کامرس کے درمیان با ہمی رابطہ ضروری ہے۔ اس با ہمی اشتراک سے دو نوں ممالک کے درمیان با ہمی تجا رت اور معاشی تعلقا ت میں اضا فہ ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ چیک ری پبلک حکومت میں مینو فیکچرنگ کی غیر معمولی صلا حیت ہے اور پاکستان کو ان ٹیکنالو جی کا فائد ہ اُٹھا نا چا ہیے ۔ دو نو ں طرف کے شر کاء نے اس با ت پر زور دیا کہ دو نو ں ممالک کے در میان ویزا میں آسانی ڈائر یکٹ فلا ئٹ کا قیا م، ۃو ٹل انڈ سٹر ی سیا حت کیلئے اور دو نو ں ممالک کے در میان جو ائنٹ وونچر اکیڈ مک تعلقا ت اور یو نیورسٹی میں داخلہ میں آسانی جیسے معاملات میں سہو لتیں ضروری ہیں ۔

مزید :

کامرس -