ضلع کونسل لودھراں کا اجلاس،41کروڑ15لاکھ کا ترمیمی بجٹ منظور

ضلع کونسل لودھراں کا اجلاس،41کروڑ15لاکھ کا ترمیمی بجٹ منظور

  

لودھراں(نما ئند ہ پا کستا ن) ضلع کونسل کا تین ماہ بعد اجلاس ہواجس میں ترمیمی بجٹ سال 2017۔18پیش کیا گیا۔ اجلاس میں سینئر ممبر پیر اصغر علی شاہ گیلانی نے کنونیئر کے فرائض انجام دیے تلاوت کی سعادت قاری عبدالمالک اورنعت شریف کی سعادت حسن رضا قادری نے حاصل (بقیہ نمبر41صفحہ7پر )

کی۔ پیر اصغر شاہ گیلانی نے ضلعی چیئرمین راجن سلطان پیرزادہ کوترمیمی بجٹ 2017۔18پیش کرنے کا کہا۔ انہوں نے اپنے خطاب میں کہا کہ غیر ترقیاتی اخراجات کم کرنے اور ترقیاتی اخراجات میں اضافہ کرنے کا وعدہ پورا کردیا ہے۔ ترمیمی بجٹ میں ترقیاتی بجٹ میں اضافہ کردیا ہے۔ا عدادو شمار کے مطابق 41,15,11,928روپے کا مجموعی بجٹ منظور ی کے لیے پیش کیا گیا جس پر تمام ممبران نے ہاتھ کھڑے کرکے بجٹ کو منظور کرنے کا اعلان کیا۔ ضلعی چیئرمین نے مزید کہا کہ ترقیاتی بجٹ میں اضافہ کرتے ہوئے 23کروڑ 95لاکھ روپے کردیا گیا ہے۔ غیر ترقیاتی اخراجات کو کم کرتے ہوئے 15کروڑ 11لاکھ 3ہزار روپے کردیا ہے۔ سال کے آخر میں 2کروڑ 9لاکھ اور 8ہزار روپے کی بچت ہوگی۔ خواتین کی ترقی کے لیے 45لاکھ روپے مختص کیے گئے ہیں۔ صاف دیہات پروگرام پنجاب کے 16اضلاع میں جاری ہے اس میں ہمارا ضلع لودھراں بھی شامل ہے۔ ایوان کے پرزور مطالبہ پر 50لاکھ روپے کی لاگت سے سکر مشین بھی خریدی گئی ہے جوکہ دیہی یونین کونسلوں میں بند سیوریج کھولنے کے لیے استعمال ہوگی۔ آئندہ سال بجٹ میں جیٹنگ مشین بھی خریدیں گے۔ اپوزیشن لیڈر میاں الیاس آرائیں نے مختلف مدات میں مختص رقوم پر اعتراض کیا اور کہا کہ اپوزیشن کے ممبران کی یونین کونسلوں میں ایک روپے کا ترقیاتی کام نہیں ہوا صاف دیہات پروگرام پورے ضلع کے لیے ہے مگر ہماری یونین کونسلوں سے ایک تنکا بھی نہیں اٹھایا گیا۔ چیف آفیسر چوہدری شفیق نے تفصیلی جواب دیا اور انہیں مطمئن کیا۔ اشفاق، اقبال وہوچہ نے ملتان روڈ کی تعمیر اور اڈا پرمٹ پر سپیڈو بس کے سٹاف کا مطالبہ کیا۔ عدنان خان جوئیہ نے بھی اڈا پرمٹ پر سٹاپ کا مطالبہ کیا ور ہر یونین کونسل میں نئی حلقہ بندیوں کے مطابق ویکسی نیشن اور سپرے کا مطالبہ کیا۔ اس کے ساتھ ساتھ انہوں نے اپنا اعزازیہ واپس جمع کرانے کا اعلان کیا اور کہا کہ ایک ہزار روپیہ فی سیشن نہ صرف ناکافی ہے بلکہ معزز ممبران کی تضحیک ہے۔ تین ہزار روپے مقرر کیا جائے۔ مظہر گیلانی نے ڈینگی سپرے کرنے کا مطالبہ کیا۔ میاں ولی کاشف نے دھنوٹ میں رورل ہیلتھ سنٹر بنانے اورسپیڈوبس کے صبح کے وقت سٹاپ مقررکرنے کا مطالبہ کیا۔ اجلاس میں پیر علاؤ الدین شاہ نے کسانوں کے مسائل بیان کیے اور مطالبہ کیا کہ گندم کی خریداری سے پہلے ڈپٹی کمشنر سے ملاقات کرکے پٹواریوں کو درست کاشت مہیا کرنے کا مطالبہ کیا۔ جیکب آفتاب نے کہا کہ لودھراں میں معصوم بچوں کے مسائل حل کرنے کے لیے چائلڈ پروٹیکشن سنٹر قائم کیا۔ 26/Mکے قبرستان کی چار دیواری بنائی جائے۔ خاتون ممبر نے بھی خطاب کیا۔ چیئرمین راجن سلطان پیرزادہ نے آخر میں کہا کہ ہم ایوان کے تقدس کے تحفظ کو قائم رکھیں گے۔ آئندہ اجلاس میں محکمہ تعلیم کے ضلعی اور تحصیلوں کے افسران کو پابند کیا جائے گا تاکہ ممبران تعلیم سے متعلقہ مسائل پیش کرسکیں اور ان کا حل نکالا جائے۔ اسی طرح ہر اجلاس میں مختلف محکموں کے افسران کو پابند کیا جائے گا تاکہ مسائل جلد سے جلد حل ہوں ہم نے عوام کے مسائل حل کرنے کا تہیہ کررکھا ہے۔ ان کے خطاب کے بعد اجلاس غیر معینہ مدت کے لیے ملتوی کردیا گیا۔ آخر میں تمام شرکاء کے لیے ظہرانے کا اہتما م کیا گیا ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -