نیسلے پاکستان ‘ کبیروالا فیکٹری کیلئے واٹر ڈے پر خصوصی سرٹیفکیٹ

نیسلے پاکستان ‘ کبیروالا فیکٹری کیلئے واٹر ڈے پر خصوصی سرٹیفکیٹ

ملتان(پ ر) نیسلے پاکستان کیکبیروالا فیکٹری پاکستان میں تیسری فیکٹری ہے جسے ورلڈ واٹر ڈے پر الائنس فار واٹر سٹیورڈ شپ سرٹیفکشن سے نوازا گیا ہے ‘ نیسلے پاکستان کی شیخوپورہ اور(بقیہ نمبر29صفحہ12پر )

اسلام آباد کی فیکٹریوں کو 2017 میں اور 2018 میں اے ڈبلیو ایس سرٹیفکیٹ پہلے ہی دئیے جا چکے ہیں ۔ اے ڈبلیو ایس دراصل ایک بین الاقوامی معیار ہے جس کی ہدایات پر کمپنیاں اور ادارے اپنی پانی کی کارکردگی کو نہ صرف اندرونی بلکہ بیرونی طور پر بھی بہتر بناتے ہیں ۔ دنیا میں پندرہ مختلف ممالک میں صرف چوبیس فیکٹریاں ایسی ہیں جو اب اے ڈبلیو ایس سرٹیفکیٹ حاصل کر چکی ہیں ‘ ان چوبیس فیکٹریوں میں سے پندرہ نیسلے فیکٹریاں ہیں ‘ جو دنیا بھر میں پھیلی ہوئی وہیں ‘ ان میں سے تین فیکٹریاں پاکستان میں موجود ہیں ۔ عالمی سطح پر نیسلے کے منصوبے کے مطابق 2020 کے اختتام تک نیسلے کی تمام فیکٹریاں اے ڈبلیو ایس سرٹیفکیٹ حاصل کرلیں گی ۔ کمیٹی کے منصوبے کے مطابق پاکستان میں نیسلے کی تمام فیکٹریاں 2019 کے اختتام تک مذکورہ سرٹیفکیٹ حاصل کرلیں گی ۔ نیسلے پاکستان کا مقصد پانی کا ایک ذمہ دار محافظ بنتے ہوئے اپنی کارکردگی کو بہتر بنانا اور اپنے ڈائریکٹ آپریشن میں پانی کے استعمال پر’’ صفر اثرات‘‘ کا امتیاز حاصل کرنا ہے ۔ نیسلے پاکستان کے کارپوریٹ امور کے ہیڈ وقار احمد نے کہا ڈبلیو ڈبلیو ڈی کے موقع پر ہماری کبیروالا فیکٹری کو اے ڈبلیو ایس سرٹیفکیٹ سے نوازا جا رہا ہے ۔ اجتماعی عمل کے نفاذ کو یقینی بنانے کیلئے نیسلے پاکستان نے Caaring for Water کا اقدام مختلف اسٹیک ہولڈرز کے ساتھ متعارف کرایا ۔ نیسلے کا مذکورہ عمل اقوام متحدہ کے پائیدار ترقیاتی ہدف نمبر 6 ’صاف پانی اور نکاسی آب‘ کے عین مطابق ہے ۔ اے ڈبلیو ایس کا معیار ہمارے لیے بہترین روڈ میپ ہے ‘ جس کے تحت ہم مجموعی طور پر مستحکم اقدامات کر سکتے ہیں ‘ اور ہمیں انفرادی طور پر چیزوں پر کام کرنے کے بجائے مجموعی طور پر یہ مسئلہ دیکھنے اور اس سے نمٹنے میں معاونت ہوتی ہے ۔ اے ڈبلیو ایس Adrian Sym کے سی ای او نے اس موقع پر کہا اے ڈبلیو ایس کے معیار کو نافذ کرنا نیسلے کے اسٹریجٹک عزم کی ایک مثال ہے جس میں کمیونٹی ‘ قدرتی ماحول اور کاروباری فوائد کیلئے پانی کی فراہمی اور اس کی اسٹیورڈ شپ کی اہمیت ظاہر کی گئی ہے ۔ ہماری عالمی رکنیت کے ذریعہ ہم دیگر اہم کاروباروں پر زور دے رہے ہیں کہ وہ نیسلے کی قیادت میں اور اس کے ساتھ پانی کے مشترکہ مسائل کیلئے قابل اعتماد اور آزادانہ طور پر قابل قدر شراکت کرنے کیلئے اے ڈبلیو ایس کے معیار پر عمل کریں ۔ ڈبلیو ڈبلیو ایف پاکستان کے سی ای او حماد نفی نے اس موقع پر کہا ورلڈ واٹر ڈے پر ہم اپنے مقصد کا پھر سے اعادہ کرتے ہیں ‘ ڈبلیو ڈبلیو ایف پاکستان ماحولیاتی تحفظ اور ملکی مشترکہ وسائل کے موثر استعمال کو فروغ دینے کا مقصد رکھتی ہے ۔ پانی کی حفاظت کیلئے مشترکہ عملدرآمد کے ذریعے ہم لوگوں اور قدرت کے فائدے کیلئے پانی کی بہترین گورننس کی وکالت ‘ حمایت اور فروغ دینے میں نجی شعبے کی کردار کو ابھارنے میں معاونت کر رہے ہیں ۔

روڈ میپففظ

مزید : ملتان صفحہ آخر