حکیموں ‘ ہومیو پیتھک ڈاکٹرز پر نئی پابندیاں

حکیموں ‘ ہومیو پیتھک ڈاکٹرز پر نئی پابندیاں

ملتان (وقائع نگار) پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل(پی ایم ڈی سی)نے (بقیہ نمبر17صفحہ12پر )

رجسٹرڈ ڈاکٹروں کے علاوہ دیگر کو ادویات تجویز کرنے اور آپریشن سے روکدیا ہے۔وفاقی وزارت نیشنل ہیلتھ سروسز کی منظوری کے بعد پی ایم ڈی سی نے پاکستان نرسنگ کونسل،پاکستان فارمیسی کونسل،ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی آف پاکستان ،پاکستان ہومیوپیتھک کونسل اور نیشنل کونسل فار طب کو مراسلہ بھیجا ہے جس میں واضح طور پر آگاہ کیا گیا ہے کہ ایلو پیتھک پریکٹس اور پریسکرپشن صرف اور صرف پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل سے رجسٹرڈ پریکٹیشنر ہی کر سکتا ہے۔اسی طرح کسی بھی قسم کا معمولی اور پیچیدہ آپریشن صرف پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل سے رجسٹرڈ میڈیکل اینڈ ڈینٹل پریکٹیشنر ہی کر سکتا ہے۔ذرائع کے مطابق یہ مراسلہ پاکستان نرسنگ کونسل کی طرف سے میٹرنٹی اینڈ نرسنگ ہومز پر سپورٹ سٹاف کو دی گئی محدود پریکٹس اور پریسکرپشن کے خاتمے کی طرف پہلا قدم ہے اور ماں اور بچے کی صحت کے کلینکس کے قیام کے لیئے پہلا بارش کا قطرہ ہے جہاں حاملہ عورتوں اور بچے کے لیئے اینٹی نیٹل،نیٹل اور پوسٹ نیٹل کیئر وغیرہ صرف ڈاکٹرز کی زیر نگرانی ہی سرانجام پائے گی۔اسی طرح حکیم اور ہومیو پیتھک پریکٹیشنرز کو بھی کسی قسم کی مائنر،میجر سرجری کی اجازت نہیں ہے۔

نئی پابندیاں

Ba

مزید : ملتان صفحہ آخر