سپریم کورٹ کے حکم پر بیوہ بھانجی کوہڑپ شدہ رقم 33لاکھ کی ادائیگی

سپریم کورٹ کے حکم پر بیوہ بھانجی کوہڑپ شدہ رقم 33لاکھ کی ادائیگی

لاہور(نامہ نگارخصوصی) دولت کی محبت رشتوں پر غالب آگئی ، ماموں نے بیوہ بھانجی کے 33لاکھ روپے دبا لئے ۔سپریم کورٹ کے نوٹس لینے پر 33 لاکھ کا چیک عدالت میں بھانجی کے حوالے کر دیا۔ سپریم کورٹ کے جسٹس منظور احمد ملک، سردار طارق مسعود اور سید منصور علی شاہ پرمشتمل بنچ کے روبروعاصمہ بی بی نامی خاتون کی درخواست کی سماعت ہوئی ۔خاتون کا موقف ہے کہ اس نے اپنے ماموں عبدالرشید کو پلاٹ خریدنے کے لئے 33 لاکھ روپے کی رقم ادا کی ، ماموں نے 16 لاکھ روپے مالیت کے پلاٹ کا33 لاکھ روپے میں سوداکروایااورپیسے وصول کرلئے ،اب پلاٹ کا قبضہ دلوارہے ہیں اور نہ پیسے واپس کئے جا رہے ہیں ،عدالت کے حکم پر خاتون کے ماموں عبدالرشید عدالت میں پیش ہوئے ،عدالت نے انہیں خبردار کیا کہ خاتون کے پیسے واپس نہ کئے گئے تو انہیں قانونی نتائج بھگتنا ہوں گے ،جس کے بعد ماموں نے عدالت کے روبرو 33 لاکھ روپے کا چیک بیوہ خاتون کے حوالے کر دیا۔

بیوہ بھانجی

مزید : علاقائی