ہائیکورٹ نے پی ایس 93سے تحریک انصاف کے امیدوار کی کامیابی کانوٹیفکیشن روکدیا

ہائیکورٹ نے پی ایس 93سے تحریک انصاف کے امیدوار کی کامیابی کانوٹیفکیشن روکدیا
ہائیکورٹ نے پی ایس 93سے تحریک انصاف کے امیدوار کی کامیابی کانوٹیفکیشن روکدیا

  


کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) سندھ ہائیکورٹ نے صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی ایس 93سے تحریک انصاف کے امیدوار حفیظ الدین اور پی ایس 21سے پیپلزپارٹی کے امیدوارکی کامیابی کا نوٹیفکیشن روک دیاگیا۔پی ایس 93میں تحریک انصاف کے امیدوار حفیظ الدین کے مخالف جماعت اسلامی کے امیدوار نے موقف اپنایاکہ پریزائیڈنگ افسر کے نتائج کے مطابق حفیظ الدین اڑھائی ہزارووٹوں سے کامیاب ہوااور بعدازاں نتائج تبدیل کردیے گئے۔ن لیگ کے امیدوار نے موقف اپنایاکہ بیلٹ پیپرز پر شیر کی بجائے زرافہ کا نشان چھاپ دیاگیاتھا جس کی وجہ سے اُن کے ووٹر گمراہ ہوئے ۔فاضل عدالت نے کامیابی کا نوٹفکیشن روکنے کا حکم دیتے ہوئے الیکشن کمیشن ، ریٹرننگ افسراور تحریک انصاف کے امیدوار کو 24مئی کیلئے نوٹس جاری کردیئے ہیں ۔عدالت نے پی ایس 21نوشہرو فیروز سے پیپلزپارٹی کے امیدوار سرفراز شاہ کی کامیابی کا نوٹیفکیشن بھی روکدیا۔پی ایس 21سے نیشنل پیپلزپارٹی کے امیدوار ابرارشاہ نے دھاندلی کے الزامات لگا کر نتائج روکنے کی استدعا کی تھی جس پر عدالت نے فریقین کو نوٹس جاری کرتے ہوئے سماعت24مئی تک ملتوی کردی ۔

مزید : الیکشن ۲۰۱۳


loading...