بد ترین لوڈشیڈنگ نے زندگی کے ہر شعبے کو متاثر کیا ہے،کامران سیف

بد ترین لوڈشیڈنگ نے زندگی کے ہر شعبے کو متاثر کیا ہے،کامران سیف

 لاہور(جنرل رپورٹر)مسلم لیگ (ق) لاہور کے جوائنٹ سیکرٹری میاں کامران سیف نے کہا ہے کہ پنجاب میں بدترین لوڈشیڈنگ نے ہر شعبہ زندگی کو متاثر کرنا شروع کردیا ہے انتخابات میں 6ماہ میں لوڈ شیڈنگ ختم کرنے کے دعویداروں نے پنجاب کو اندھیروں میں ڈبو دیاہے اربوں روپے خرچ کرنے والے اور پنجاب میں ایک علیحدہ محکمہ انرجی ڈیپارٹمنٹ قائم کرنے والے پنجاب کے حکمرانوں سے ان کی کارکردگی کے متعلق سوال کریں تو وہ لوڈ شیڈنگ کے عذر کے پیچھے چھپ جاتے ہیں میاں کامران سیف نے کہا کہ شہروں میں 12گھنٹے اور دیہاتوں میں 16گھنٹے لوڈ شیڈنگ نے کاروبار زندگی سمیت ہر شعبہ کو متاثر کرنا شروع کردیا ہے اور عوام بدترین لوڈشیڈنگ کے خلاف مختلف شہروں میں سراپا احتجاج ہیں۔

 لوڈشیڈنگ کا جن بوتل سے باہر آگیا ہے عوام کو نہ رات کو سکون ہے اور نہ دن میں چین ہے عوام کا صبر کا پیمانہ لبریز ہوگیا ہے خادم اعلیٰ پنجاب لوڈ شیڈنگ کے خلاف مختلف شہروں میں ہونے والے احتجاجی مظاہروں میں شرکت کریں۔ حکومت اپنے وعدے کے مطابق چھ ماہ میں بجلی بحران کے خاتمہ کے دعوے کو عملی شکل دے ۔انہوں نے وزیراعظم کی جانب سے2010تک بجلی بحران کے خاتمہ کی نوید کو طفل تسلی قرار دیتے ہوئے کہا کہ عوام حکومتی دعووں پر اب مزید صبر نہیں کرسکتے ،انہیں مسائل کا فوری حل چاہئے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1