پاکستان کرکٹ بورڈ کی سربراہی مذاق بن گئی،چڑیا کی ایک بار پھر واپسی ہو گئی

پاکستان کرکٹ بورڈ کی سربراہی مذاق بن گئی،چڑیا کی ایک بار پھر واپسی ہو گئی
پاکستان کرکٹ بورڈ کی سربراہی مذاق بن گئی،چڑیا کی ایک بار پھر واپسی ہو گئی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد ( نیوز ڈیسک ) پاکستان کرکٹ بورڈ کی سربراہی ’’ تماشہ‘‘ بن گئی ٗ سپریم کورٹ نے اسلام آباد ہائیکورٹ کے فیصلے کو معطل کرتے ہوئے نجم سیٹھی کو ایک بار پھر چیئرمین پی سی بی کے عہدے پر بحال کر دیا ٗ عدالت نے نجم سیٹھی کے دور میں کرکٹ کے حوالے سے کئے گئے فیصلوں کو قانونی قرار دے دیا ٗفریقین کو نوٹس جاری ٗ 27 مئی کو طلب کر لیا گیا ٗوفاقی حکومت نے ذکا اشرف کی بطور چیئرمین پاکستان کرکٹ بورڈ بحالی سے متعلق اسلام آباد ہائی کورٹ کے فیصلے کو سپریم کورٹ میں چیلنج کیا تھا۔ بدھ کو سپریم کورٹ کے جسٹس ظہیر انور جمالی کی سربراہی میں 3رکنی بنچ نے بین الصوبائی رابطہ کمیٹی کی جانب سے اسلام آباد ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف دائر درخواست کی سماعت کی ۔ دوران سماعت بین الصوبائی رابطہ کمیٹی کے وکیل نے عدالت میں موقف اختیار کیا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ کے فیصلے سے پاکستان کرکٹ بورڈ کو کروڑوں روپے کا نقصان ہو گا، چیئرمین پی سی بی کی تقرری کا فیصلہ ایگزیکٹو معاملہ ہے اور یہ اختیار کرکٹ بورڈ کے پیٹرن ان چیف وزیراعظم نواز شریف کو حاصل ہے، عدالت کو ان معاملات میں دخل اندازی نہیں کرنی چا ہیے ۔ جس پر عدالت نے اپنا فیصلہ سناتے ہوئے چوہدری ذکا اشرف کی بحالی کو معطل جبکہ نجم سیٹھی کو ان کے عہدے پر بحال کر دیا۔ سپریم کورٹ نے نجم سیٹھی کے دور میں کرکٹ کے حوالے سے کئے گئے فیصلوں کو بھی قانونی قرار دے دیا اور فریقین کو نوٹس جاری کرتے ہوئے 27مئی کو طلب کر لیا ہے۔واضح رہے کہ 3روز قبل ہی اسلام آباد ہائی کورٹ نے چوہدری ذکا اشرف کو ان کے عہدے پر بحال کرتے نجم سیٹھی کو برطرف جبکہ عبوری انتظامی کمیٹی کو معطل کر دیا تھا۔ نجم سیٹھی نے رواں ماہ ہی وقار یونس کو 2 سال کے لئے پاکستان کرکٹ ٹیم کا ہیڈ کوچ جب کہ اتنی ہی مدت کے لئے مشتاق احمد کو اسپن بالنگ کوچ اور گرانٹ فلاور کو بیٹنگ کوچ مقرر کیا تھا۔ اس سے قبل بھی نجم سیٹھی کو 2 مرتبہ چیئرمین پی سی بی کے عہدے سے معطل اور پھر بحال کیا گیا جب کہ 3مرتبہ ہی ذکا اشرف کو کرکٹ بورڈ کے سربراہ کے طور پر بحال اور معطل کیا جا چکا ہے۔

مزید : کھیل