پنجاب میں امسال کپاس کی کاشت کا ہدف 60لاکھ ایکڑ مقرر ہے: ڈاکٹرعابد محمود

پنجاب میں امسال کپاس کی کاشت کا ہدف 60لاکھ ایکڑ مقرر ہے: ڈاکٹرعابد محمود

لاہور(کامرس رپورٹر)ادارہ کی تیار کردہ کپاس ،گندم اور چاول کی اقسام کی پیداواری صلاحیت اور کوالٹی بین الاقوامی معیار کے مطابق ہے ۔یہ بات ڈ ائریکٹر جنرل زراعت (ریسرچ) پنجاب ڈاکٹر عابدمحمودنے چینی وفد کے زرعی ماہرین کو ایوب زرعی تحقیقاتی ادارہ، فیصل آباد کے دورہ کے موقع پر منعقدہ بریفنگ اجلاس میں بتائی۔ اس موقع پر ڈ ائریکٹر گندم ڈاکٹر مخدوم حسین ، ڈ ائریکٹر بائیو ٹیکنالوجی ڈاکٹرمحمد ظفراقبال اور ڈ ائریکٹر دالیں چوہدری محمد رفیق بھی موجود تھے۔ ڈاکٹر عابد محمود نے ادارہ کے اغراض و مقاصد،ادارہ کی تحقیقاتی سرگرمیوں ، نئی اقسام اورادارے کے تمام شعبوں کی کارکردگی پر روشنی ڈالی۔انہوں نے بتایا کہ پنجاب میں امسال 60لاکھ ایکڑ پر کپاس کی کاشت سے 1کروڑ 5لاکھ گانٹھ کے حصول کا ہدف مقرر کیا گیا ہے۔ وفد کو بتایا گیا کہ کپاس کی نئی اقسام زیادہ پیداواری صلاحیت کی حامل ہیں اور ان کے ریشے کی کوالٹی بھی اعلی ہے۔ان اقسام میںخشک سالی ، موسمی تبدیلی ، زیادہ درجہ حرارت برداشت کرنے کی صلاحیت اور پتہ مروڑ وائرس کے خلاف قوت مدافعت بھی موجود ہے۔ چینی وفد نے ادارہ کی سرگرمیوں کو سراہا ۔وفد نے بتایا کہ چین اور حکومت پا کستان کے مشترکہ تعاون سے پاکستان میںکپاس پر تحقیق کیلئے ایک عالمی معیار کا ادارہ قائم کیا جارہا ہے ۔ اس کے علاوہ پاکستان میں جدید مشینری پر مشتمل جننگ فیکٹری بھی لگائی جائے گی جس میں اعلی معیار کی جننگ ہوگی اور کسانوں کو کوالٹی پریمیم دیا جائے گا۔وفد نے ادارہ میں لگائی گئی زرعی نمائش بھی دیکھی ۔

مزید : کامرس