وہ مفید کھانے جو ہم ضائع کر دیتے ہیں

وہ مفید کھانے جو ہم ضائع کر دیتے ہیں

او مفید کھانے جو ہم ضائع کر دیتے ہیں

وہ مفید کھانے جو ہم ضائع کر دیتے ہیں

  

برمنگھم (نیوز ڈیسک) کھانا ضائع کرنا بہت بری بات ہے لیکن ہم یہ کام روز کرتے ہیں اور نہ صرف اپنا مالی نقصان کرتے ہیں بلکہ قیمتی غذائیت سے بھی محروم ہوجاتے ہیں۔ پھلوں کے چھلکوں اوربعض سبزیوں کے پتوں کے بارے میں تو سمجھا ہی یہ جاتا ہے کہ انہیں ضائع کردینا چاہیے۔ لیکن آپ حیران ہوں گے کہ ہم جو چیزیں ضائع کررہے ہیں ان کے کتنے فوائدہیں مثلاً مالٹے کے چھلکے کو ہی لیجئے یہ فائبر، فلیونائڈ اور وٹامنز سے بھرپور ہوتا ہے۔ اس میں معدے کی جلن اور بدہضمی ختم کرنے والا کیمیکل ڈی لائیمونین اور وٹامن سی پایا جاتا ہے۔ یہ مدافعت پیدا کرنے اور سانس کی بیماریوں سے بچانے میںمفید ہے۔ مالٹے کے چھلکے کو دوسرے پھلوں کے ساتھ ملا کر جوس بنایاجاسکتاہے۔ اس طرح پیاز کے چھلکے میں کویرسیٹن (Quercetin) نامی مادہ پایا جاتا ہے جو کہ بلڈ پریشر کو کم کرتا ہے اور خون کے لوتھڑے نہیں بننے دیتا جس سے خون شریانوں میں رواں رہتا ہے، الرجی اور خارش سے بھی بچاتا ہے۔ اسے مختلف کھانوں کے ساتھ پکا کر بعد میں علیحدہ کیا جاسکتا ہے۔ تربوز کا چھلکا ایک اور صحت بخش غذا ہے اس میں کلٹرولین (Cltrulline) نامی امائینوایسڈ پایا جاتا ہے جو کہ دوران خون کے نظام کو بہتر بناتا ہے۔ اسے بھی فروٹ جوس میں شامل کیا جاسکتا ہے۔ اگر سبزیوں کی بات کی جائے تو بروکلی کے پتوں میں کیروٹی نائیڈز (Carotenoids) اور وٹامن A اور C پایا جاتا ہے۔ اسے پالک کی طرح پکایا جاسکتا ہے۔ اسی طرح سیلری (Celery) کے پتوں میں میگنیشیم، کیلشیم اور وٹامن سی کے علاوہ فینولکس (Phenolics) پائے جاتے ہیں جو کینسر اور دل کی بیماریوں سے بچاتے ہیں۔ ان پتوں کو سوپ، سلاد اور فٹنی میں استعمال کیا جاسکتا ہے۔

مزید : تعلیم و صحت