پرسکون نیند کے لئے بہترین انداز

پرسکون نیند کے لئے بہترین انداز

پرسکون نیند کے لئے بہترین انداز

پرسکون نیند کے لئے بہترین انداز

  

برمنگھم (نیوز ڈیسک) اچھی اور پرسکون نیند ہماری دن بھر کی تھکن اتار کر ہمیں تازہ دم کردیتی ہے لیکن اگر ہم درست پوزیشن میں نہ سوئیں تو اس سے جسم کو سخت نقصان بھی پہنچ سکتا ہے جیسے گردن میں بل پڑنا یا کمر کا درد وغیرہ تو جس پوزیشن میں سوتے ہیں اس کے فوائد و نقصانات کا آپ کو علم ہونا چاہیے۔ کمر کے بل سونا جس میں آپ کے بازو آپکی دونوں اطراف میںہوتے ہیں، کو سونے کا بہترین طریقہ سمجھا جاتا ہے کیونکہ یہ ریڑھ کی ہڈی اور گردن کے مسائل سے بچاتا ہے لیکن اس پوزیشن میں سونے والے زیادہ خراٹے لیتے ہیں اور بعض اوقات سانق لینے میں مشکل محسوس کرسکتے ہیں۔ اگر آپ کمر کے بل لیٹتے ہیں اور اپنے بازو سر سے اوپر رکھتے ہیں جیسا کہ تکیے کے گرد لپیٹ کر، تو اس کے فوائد بازو اطراف میں رکھ کر کمر کے بل لیٹنے سے ملتے جلتے ہیں۔ کمر کے بل لیٹنے سے آپ چہرے کی جھریوں سے بھی محفوظ رہ سکتے ہیں لیکن بازو سر سے اوپر ہونے کی صورت میں کندھوں میں کھنچاﺅ کی وجہ سے درد کی شکایت ہوسکتی ہے۔ الٹا سونا ہاضمے کے عمل کو بہتر بناسکتا ہے لیکن اس سے گردن میں کھنچاﺅ اور کمر کی تکلیف ہوسکتی ہے۔ انے گھٹنوں اور بازوﺅں کو قریب لاکر گیند کی شکل میں سونے کا طریقہ سب سے زیادہ نقصان دہ ہے اس سے کمر اور گردن کے مسائل پیدا ہوتے ہیں لیکن یہ طریقہ خراٹے لینے والے اور حاملہ عورتوں کو پرسکون نیند دے سکتا ہے۔ اگر آپ بازو نیچے کرکے اپنی ایک سائیڈ پر سوئیں تو یہ طریقہ ریڑھ کی ہڈی اور کمر کیلئے بہترین ہے۔ تاہم اس سے جلد پر جھریوں کا عمل قدرے تیز ہوسکتا ہے اور گر اس طریقے سے سوتے ہوئے آپ کے بازو سر سے اوپر کی طرف ہوں تو پٹھوں میں کھنچاﺅ کی تکلیف ہوسکتی ہے۔ تاہم آپ جس پوزیشن میں بھی سوئیں ایک اضافی تکیے کو اس طرح استعمال کریں کہ یہ آپ کے جسم کو لیول رکھنے میں مدد دے جیسا کہ سیدھا لیٹے ہوئے کمر کے نیچے ایک باریک تکیہ یا الٹا سوتے ہوئے کمرے کے نیچے باریک تکیہ رکھ لیں۔

مزید : تعلیم و صحت