ذیابیطس کے مریضوں کے لئے ضروری کھانے

ذیابیطس کے مریضوں کے لئے ضروری کھانے
ذیابیطس کے مریضوں کے لئے ضروری کھانے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

نیو یارک (بیورونیوز ) ذیابیطس ایک ایسی بیماری ہے جس میں خون میں موجود شوگر کی مقدار بڑھ جاتی ہے۔ کچھ اطباءنے اسے گوشت گھلانے والی بیماری کے نام سے بھی پکارا۔ گوکہ اس بیماری کا ذکر ہزاروں سال پرانی کتابوں میں بھی موجود ہے لیکن بیسویں صدی سے قبل تک ذیابیطس کا علاج دریافت نہیں ہوا تھا اور مریض بہت تکلیف اٹھانے کے بعد چل بستے تھے۔ 1921ءمیں انسولین کی دریافت ہوئی تو ذیابیطس کے مریضوں میں موت کی شرح میں واضح کمی آئی۔ آج مارکیٹ میں انسولین کے علاوہ بھی ذیابیطس کی متعدد ادویات باآسانی دستیاب ہےں، لیکن ہم آپ کو یہاں کچھ ایسی غذاﺅں کے بارے میں بتائیں گے جن کا استعمال نہ صرف خون میں شوگر کی سطح کو بڑھنے سے روکتا ہے بلکہ عمومی صحت پر بھی خوشگوار اثرات مرتب کرتا ہے۔

سادہ چاکلیٹ: ایک تحقیق کے مطابق چاکلیٹ میں موجود اجزاءانسولین کی حساسیت کو بڑھاتے ہوئے اس کی سطح کو کم کرتے ہیں۔ یاد رہے کہ شوگر کی سطح کم کرنے کے لئے صرف سادہ چاکلیٹ کا استعمال کیا جائے، دودھ والی یا دیگر میٹھی چاکلیٹ سے شوگر کے مریض فوائد حاصل نہیں کر سکتے۔ سادہ چاکلیٹ نہ صرف شوگر کے علاج میں مفید ہے بلکہ اس کے استعمال سے بلڈ پریشر کی سطح متناسب رہتی ہے اور ہارٹ اٹیک کے امکانات میں 2فیصد تک کمی بھی آتی ہے۔

گوبھی: گوبھی قدرتی طور پر اینٹی ذیابیطس اجزاءپر مشتمل ہے۔ یہ نہ صرف ذیابیطس کا علاج کرتی ہے بلکہ سلاد کے طور پر اس کا استعمال خون کی شریانوں کو بھی ذیابیطس کے بداثرات سے محفوظ رکھتا ہے۔

بلیوبیری: بلیو بیری انسانی جسم میں گھلنے اور نہ گھلنے والے ریشوں پر مشتمل ہوتی ہے، اس کے استعمال سے نہ صرف خون میں شوگر کی سطح مستحکم رہتی ہے بلکہ یہ معدے کے امراض کے علاج میں بھی نہایت مفید ہے۔

کٹی ہوئی جوء: جوءمیں میگنیشیم کی اچھی خاصی مقدار پائی جاتی ہے، جو انسانی جسم کو گلوکوز اور انسولین کے بہترین استعمال کے قابل بنا دیتی ہے۔ جوءکا باقاعدگی سے استعمال شوگر ہونے کے امکانات کو کم کر دیتا ہے۔

مچھلی: مچھلی اور اس کا تیل اومیگاتھری نامی پروٹین سے بھرپور ہوتا ہے اور یہ پروٹین ذیابیطس سے محفوظ رکھنے میں نہایت اہم کردار ادا کرتا ہے۔ ہزاروں تحقیقات سے ثابت ہوا ہے کہ مچھلی کا استعمال نہ صرف ذیابیطس بلکہ امراض قلب سے حفاظت کا موجب بھی ہے۔

ان غذاﺅں کے علاوہ زیتون کا تیل، سلیم (افریقی پھول کا بیج) کا چھلکا، پالک، میٹھے آلو، اخروٹ، دار چینی اور ہلدی کا استعمال بھی ذیابیطس کے مریضوں کے لئے نہایت سود مند ہے۔

مزید : تعلیم و صحت