دوران پرواز 7 سالہ بچے نے کھڑکی کے باہر موجود ایسی چیز کی تصویر کھینچ لی کہ دیکھ کر دنیا دنگ رہ گئی ، ایسا کیا تھا ؟ دیکھ کر آپ کے بھی اوسان خطا ہو جائیں گے

دوران پرواز 7 سالہ بچے نے کھڑکی کے باہر موجود ایسی چیز کی تصویر کھینچ لی کہ ...
دوران پرواز 7 سالہ بچے نے کھڑکی کے باہر موجود ایسی چیز کی تصویر کھینچ لی کہ دیکھ کر دنیا دنگ رہ گئی ، ایسا کیا تھا ؟ دیکھ کر آپ کے بھی اوسان خطا ہو جائیں گے

  


نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) فضائی سفر کے دوران ہوائی جہاز سے باہر مسافروں کے اڑن طشتریوں جیسی عجیب الخلقت اشیاءدیکھنے کی رپورٹس تو سامنے آتی رہتی ہیں لیکن گزشتہ دنوں امریکی ریاست ٹیکساس میں طیارے میں سفر کے دوران ایک 7سالہ بچے نے طیارے کے ساتھ ساتھ اڑتی ایسی چیز کی تصویر بنا ڈالی کہ دنیا دنگ رہ گئی ہے۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق اس بچے کا نام آشر للیس ہے جو ذہنی عارضے کا شکار اور بولنے کی صلاحیت سے محروم ہے۔ گزشتہ دنوں وہ اپنی فوٹوگرافر والدہ کیری کے ہمراہ ہوائی جہاز میں سفر کر رہا تھا۔ ایک جگہ اس نے اپنی ماں کا فون اٹھایا اور کھڑی سے باہر کی تصاویر بنانے لگا۔

جب کیری نے اس سے اپنا فون واپس لیا اور اس کی بنائی ہوئی تصاویر دیکھنے لگی۔ ان میں ایک تصویر ایسی آئی جسے دیکھ کر اس کے اوسان خطا ہو گئے۔یہ تصویر ایک انسان نما ہیولے کی تھی جو جہاز کے ساتھ ساتھ اڑ رہا تھا۔ کیری نے اپنے فیس بک پیج پر یہ تصویر شیئر کی ہے اور لکھا ہے کہ ”میں اپنے 7سالہ بیٹے کے ساتھ ہوسٹن سے واشنگٹن جا رہی تھی کہ راستے میں اس نے میرا فون لے کر دو درجن سے زائد تصاویر بنا ڈالیں۔ جب میں اس سے فون لے کر یہ تصاویر ڈیلیٹ کرنے لگی تو میں یہ تصویر دیکھ کر مہبوت رہ گئی۔ ہم شروع سے جانتے ہیں کہ میرے بیٹے میں دوسروں کی ضروریات کے متعلق ایک چھٹی حس ہے۔ جب کسی کو کوئی ضرورت ہو تو اسے فوراً معلوم ہو جاتا ہے۔ وہ اکثر اپنے ہاتھ پروں کی طرح ہلا کر اپنے آس پاس کسی چیز کی موجودگی کے متعلق بتاتا تھا۔ اب اس تصویر کو دیکھ کر ہم اس نتیجے پر پہنچے ہیں کہ یہ اس کا محافظ فرشتہ ہے جو اس کے ساتھ ساتھ اڑتا رہتا ہے۔ وہ اسی کے متعلق ہمیں اشاروں سے بتایا کرتا تھا۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس