کیا ویاگرا استعمال کرنا مردوں کو کینسر کا شکار بنا دیتا ہے؟ جدید تحقیق میں سائنسدانوں نے پہلی مرتبہ حتمی جواب دے دیا، وہ بات بتادی جو مردوں کو ضرور معلوم ہونی چاہیے

کیا ویاگرا استعمال کرنا مردوں کو کینسر کا شکار بنا دیتا ہے؟ جدید تحقیق میں ...
کیا ویاگرا استعمال کرنا مردوں کو کینسر کا شکار بنا دیتا ہے؟ جدید تحقیق میں سائنسدانوں نے پہلی مرتبہ حتمی جواب دے دیا، وہ بات بتادی جو مردوں کو ضرور معلوم ہونی چاہیے

  


نیویارک (نیوز ڈیسک) تقریباً دو دہائیاں قبل جب مردانہ کمزوری کی شہرہ آفاق دوا ’ویاگرا‘مارکیٹ میں آئی تو گویا ایک انقلاب آگیا۔ مردانہ صحت کیلئے ویاگرا کے حیرت انگیز فوائد نے ہر کسی کو حیران کر دیا لیکن اس کے مضر صحت اثرات کے بارے میں عام ہونے والی باتوں نے مردوں کو بے حد پریشان بھی کیا۔شاید سب سے زیادہ پریشان کن بات یہ تھی کہ ویاگراکا استعمال جلد کے خطرناک کینسر کا سبب بھی بن سکتا ہے۔ 

ڈیلی سٹار کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ سال جرمن سائنسدانوں نے خبردار کیا تھا کہ ویاگرا کا استعمال جلد کے انتہائی خطرناک کینسر ’میلا نوما‘ کا سبب بن سکتا ہے، لیکن اب امریکا کی نیویارک یونیورسٹی کے سائنسدانوں نے اس دعوے کو غلط ثابت کر دیا ہے۔ اس تازہ ترین تحقیق کے مطابق ویاگرا کا جلد کے کینسر سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ اگرچہ ویاگرا کو براہ راست میلا نوما کینسر کی وجہ قرار نہیں دیا گیا لیکن اس کے باوجود سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ یہ دوا استعمال کرنے والوںمیں جلد کے کینسرکی تشخیص 11فیصد زیادہ پائی گئی ہے ۔ ماہرین کا خیال ہے کہ اس کا تعلق بیماری کی وجوہات کی بجائے تشخیص کی نسبتاً زیادہ شرح سے ہے کیونکہ ویاگرا جیسی ادویات استعمال کرنے والے زیادہ باقاعدگی سے اپنا طبی معائنہ کرواتے ہیں اور یوں ان میں کینسر کی بیماری موجود ہونے پر اس کا پتہ چلنے کا امکان بھی زیادہ ہوتا ہے۔

تحقیق کی سربراہ ڈاکٹر سٹیسی لوئب آف نیو یارک یونیورسٹی کا کہنا تھا کہ موجودہ تحقیقاتی نتائج کے مطابق ویاگرا کو جلد کے کینسر کی وجہ قرار نہیں دیا جا سکتا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ جلد کے کینسر کی بڑی وجوہات سورج کی تیز روشنی میں زیادہ وقت گزارنا اور جلد پر مضر صحت کیمیکل اشیاءکے اثرات ہی ہیں۔

مزید : تعلیم و صحت