سرکاری ہسپتالوں کو مریضوں کیلئے بہترین علاج گاہیں بنائینگے ،یاسمین راشد

سرکاری ہسپتالوں کو مریضوں کیلئے بہترین علاج گاہیں بنائینگے ،یاسمین راشد

  

ملتان( وقا ئع نگار )میڈیکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوشنز ایکٹ میڈیکل ٹیچنگ یونیورسٹیز کو انتظامی طور پر بہت مضبوط کرے گا۔ان خیالات کا اظہار وزیرصحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد نے محکمہ سپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر اینڈ میڈیکل ایجوکیشن میں ایم ٹی آئی ایکٹ کے حوالے سے اعلیٰ سطحی اجلاس سے خطاب(بقیہ نمبر34صفحہ7پر )

 کرتے ہوئے کیا۔اجلاس میں سپیشل سیکرٹری سپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر اینڈ میڈیکل ایجوکیشن میاں شکیل، وائس چانسلر فاطمہ جناح میڈیکل یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر عامر زمان خان، وائس چانسلر کنگ ایڈورڈ میڈیکل یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر خالد مسعود گوندل، وائس چانسلر نشتر میڈیکل یونیورسٹی ملتان پروفیسر ڈاکٹر مصطفی کمال پاشا، وائس چانسلر فیصل آباد میڈیکل یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر ظفر اللہ چوہدری اور وائس چانسلر راولپنڈی میڈیکل ٹیچنگ یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر عمر اور قانونی ماہرین بھی موجود تھے۔اجلاس کے دوران میڈیکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوشنز ایکٹ کے تمام قانونی پہلوو¿ں کا بغور جائزہ لیا گیا۔ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہا کہ ایم ٹی آئی ایکٹ کے بعد پنجاب کے سرکاری ٹیچنگ ہسپتالوں میں آنے والے مریضوں کو مزید طبی سہولیات فراہم ہوں گی۔میڈیکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوشن ایکٹ ہیلتھ سروس ڈلیوری میں بہتری کے لئے گیم چینجرثابت ہو گا۔ایم ٹی آئی ایکٹ کے حوالے سے تمام سٹیک ہولڈرز سے صلاح مشورہ جاری ہے۔محکمہ صحت پنجاب کی جانب سے اٹھائے گئے تمام اقدامات کا صرف اور صرف مقصدمریضوں کو سہولت دینا ہے۔ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہا کہ پنجاب کے سرکاری ہسپتالوں میں مریضوں کو بہترین طبی سہولیات کی فراہمی اور ادویات کی دستیابی پر کسی قسم کا سمجھوتہ نہیں کیا جا رہا۔سرکاری ہسپتالوں میں مریضوں کے لئے دوستانہ ماحول اور جدید نظام متعارف کروانے کی کوشش کر رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ پنجاب کے سرکاری ہسپتالوں کو مریضوں کے لئے بہترین علاج گاہیں بنا کر دم لیں گے۔سرکاری ہسپتالوں کو نجی ہسپتالوں کے معیار سے بہتر کرنے کے لئے کوشاں ہیں۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -