ملتان :ہسپتالوں کی ممکنہ نجکاری کیخلاف سرائیکستان نوجوان تحریک کا مظاہرہ

 ملتان :ہسپتالوں کی ممکنہ نجکاری کیخلاف سرائیکستان نوجوان تحریک کا مظاہرہ

  

ملتان ( سٹاف رپورٹر)سرائیکی وسیب کے نشتر و دیگر ہسپتالوں کی ممکنہ نجکاری کے خلاف سرائیکستان نوجوان تحریک کا 9 نمبر چونگی پر بھرپور احتجاجی مظاہرہ۔ مظاہرین نے گھنٹہ گھر روڈ بند کر کے نشتر کی نجکاری نامنظور نامنظور ، شرم کرو حیاءکرو ‘غریبوں کے لیے علاج فری کرو “ کی بھرپور نعرے بازی (بقیہ نمبر35صفحہ7پر )

کی۔ مظاہرین نے بینر اٹھا رکھے تھے جن پر حکومت سے مطالبہ کیا گیا تھا کہ نشتر کسی صورت پرائیویٹ نہ کیا جائے بلکہ کرپشن کو ختم کر کے علاج کی سہولیات فری دیں جائیں۔ مظاہرے کی قیادت ڈویژنل صدر ایس این ٹی مہر ظفر اقبال ہراج ، ملک شوکت اوبھایا، ، شعیب خان ٹانگرا، ملک تنویر اعوان، جام مظہر حسین اور مہر ثمر ہراج نے کی ۔ مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے مہر ظفر ہراج اورملک شوکت اوبھایا نے کہا کہ حکومت ہوش کے ناخن لے اور نشتر کو پرائیویٹ کرنے سے باز رہے کیونکہ ہر غریب اپنے علاج کے لیے سرکاری ہسپتالوں میں آتا ہے تاکہ اس کو فری ادویا ت ملیں، انہوں نے کہا کہ غریب پرائیویٹ ہسپتالوں میں ڈاکٹرز کی فیس بھی ادا نہیں کر سکتے تو وہ علاج کیسے کروائیں گے ۔ اس لیے حکومت اپنی ناکامی کو نہ چھپائے اور نشتر سمیت تمام سرکاری ہسپتالوں سے کرپشن ختم کر کے ادارے ٹھیک کرے ۔ انہوں نے کہا کہ سرائیکی خطے کے ڈاکٹرز کے ساتھ بھی حکومت کو ناانصافی نہیں کرنے دیں گے اور نہ ان کو بے روزگار ہونے دیں گے جو ڈاکٹرز کرپٹ ہیں ان کو فارغ کر کے سخت سزا دی جائے ۔ مظاہرے میں احمد نواز جٹ، راﺅ منان، راﺅ راشد ، علی گجر ، عبدالحمید ہراج، منتظر بھٹی ، سہیل مسیح ، کالے خان بھٹہ، اشفاق کھوکھر ، امجد خان، وسیم بھٹی، فیصل شاہ سمیت کثیر تعداد میں نوجوانوں نے شرکت کی ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -