گھریلو ملازمہ قتل کیس، مرکزی ملزمہ نے ضمانت کی درخواست دائر کردی

گھریلو ملازمہ قتل کیس، مرکزی ملزمہ نے ضمانت کی درخواست دائر کردی

  

لاہور(نامہ نگار)اقبال ٹاو¿ن گھریلو ملازمہ عظمیٰ قتل کیس میںملزمان کی جانب سے ورثا کو دیت کی رقم دینے کے معاملہ کے بعد مرکزی ملزمہ مالکن ماہ نورنے ایڈیشنل سیشن جج اکرام الحق کی عدالت میں ضمانت کی درخواست دائر کردی ۔16سالہ گھریلو ملازمہ عظمیٰ کے والد اور دیگر ورثانے سیشن عدالت میں پیش ہو کر ملزمان سے دیت کی رقم پر معاملہ نمٹانے کے حوالے اپنے بیانات قلمبند کرا دئیے ہیں ،گھر کی مالکن ماہ نور، اس کی بیٹی آئمہ نعیم اور نند ریحانہ پر گھریلو ملازمہ عظمی کو تشدد کرکے قتل کرنے کا الزام ہے ،ملزمان کے خلاف تھانہ اقبال ٹاو¿ن پولیس نے مقدمہ درج کررکھاہے ،ایف آئی آر کے مطابق ملزموں نے گھریلو ملازمہ کو تشدد سے کو قتل کرکے اس کی نعش گندے نالے میں پھینک دی تھی ،ملزمہ کی جانب سے دائر ضمانت کی درخواست میں کہا گیاہے کہ ا ن کا فریقین سے سمجھوتہ ہوا گیا ہے ،ورثا کو خون بہا کی رقم دی جا رہی ہے ،عدالت سے استدعاہے کہ ضمانت منظور کی جائے تاکہ وہ بینک سے رقم نکلواسکے اور ورثا کو ادا کر سکے،اس کیس کی مزید سماعت کل 23 مئی کو ہوگی ۔

مزید :

علاقائی -